وفاقی بجٹ میں 356 ارب کے اخراجات کا انحصار بیرونی قرضوں پر ہوگا

اسلام آباد: وفاقی بجٹ میں حکومت نے ماضی کے طرح بیرونی قرضوں پر انحصار کیا ہے۔ اس سال حکومت نے 356 ارب روپے کے بیرونی قرضے لینے کا ارادہ کیا ہے۔ قرضہ مالیاتی اداروں اور دوست ممالک سعودی عرب، کویت، جاپان اور جرمنی دے گا۔ صوبوں میں سب سے زیادہ بیرونی قرضہ پنجاب کو ملے گا جو ایک سو سترہ ارب کا قرضہ لےگا۔ صوبہ سندھ کو بیالیس ارب، خیبرپختونخواہ انتیس ارب جبکہ بلوچستان کو چھ ارب کا قرضہ ملے گا۔ واپڈا کو انیس ارب، پیپکو کو پینتیس ارب جبکہ این ایچ اے کو چھیاسی ارب کا قرضہ دیا جائے گا۔ خیبر پختونخواہ ماس ٹرانزٹ منصوبے کیلئے پندرہ ارب کا قرضہ ایشیائی ترقیاتی بینک سے لے گا۔

یہ بھی پڑھیں

فریال تالپور کی سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کو یقینی بنانے کے انتظامات کیے جائیں

فریال تالپور کی سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کو یقینی بنانے کے انتظامات کیے جائیں

اسلام آباد: سندھ اسمبلی میں ہونے والے اجلاس میں شرکت کی تاہم بدھ کے روز …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے