وزیراعظم کو چاہیے کہ ایران اور سعودی عرب کے درمیان صلح کے لیے کردار ادا کریں، رحمان ملک

لاہورـ سابق وزیرداخلہ رحمان ملک کہتے ہیں امریکی صدر ٹرمپ نے اپنے رویئے سے پاکستانی قوم کو تکلیف پہنچائی ہے، انہیں سعودی عرب میں پاکستان کی دہشت گردی کے خلاف جنگ میں دی جانے والی قربانیوں کا تذکرہ کرنا چاہیے تھا۔ لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رحمان ملک کا کہنا تھا کہ اسلام میں کوئی دہشتگردی نہیں ہے۔ ٹرمپ نے اپنے رویئے سے پاکستانی قوم کو تکلیف پہنچائی۔ انہوں نے کہا کہ وہ پہلے بھی کہہ چکے ہیں کہ پاکستان سمیت دنیا کے کئی ممالک میں داعش پھیل چکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک دشمن قوتین سی پیک کو ناکام بنانے کی کوششیں کررہی ہیں۔ اگلے بجٹ میں پاک چین اقتصادی راہداری کی سیکیورٹی کیلئے رقم مختص ہونی چاہیئے۔ سابق وزیر داخلہ نے کہا کہ وزیراعظم کو چاہیے کہ ایران اور سعودی عرب کے درمیان صلح کے لیے کردار ادا کریں۔ رحمان ملک نے کہا کہ پیپلزپارٹی کے دور اقتدار کے دوران وہ قیادت کی ہدایات کے مطابق ایم کیو ایم کے ساتھ رابطے میں رہے۔

یہ بھی پڑھیں

ماضی کی وفاقی اور صوبائی حکومت میں موجود چند عناصر نے مس ہینڈل کیا

ماضی کی وفاقی اور صوبائی حکومت میں موجود چند عناصر نے مس ہینڈل کیا

کوئٹہ: سردار یار محمد نے وزیراعظم سے مطالبہ کیا ہے کہ تحقیقات کرنے والے کمیشن …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے