جندال کا دورہ بیک ڈور ڈپلومیسی کا حصہ نہیں تھا، مصدق ملک

اسلام آباد: مسلم لیگ نواز کے رہنما اور وزیراعظم کے ترجمان مصدق ملک نے کہا ہے کہ سجن جندال کا دورہ بیک ڈور ڈپلومیسی کا حصہ نہیں تھا۔ جندال نے ذاتی حیثیت میں وزیر اعظم سے ملاقات کی۔ تمام اداروں سے مشاورت کے بعد عالمی عدالت گئے۔ شواہد ہونے کے باوجود عالمی عدالت میں کیوں نہ جاتے۔ عالمی عدالت میں بھرپور انداز میں کیس لڑا جائے گا۔ نجی ٹی وی سے بات چیت کرتے ہوئے مصدق ملک کا کہنا تھا کہ بھارت کے ساتھ 1960ء میں ٹریٹی پر دستخط ہوئے جو معاملات حل نہ کر سکیں وہ عالمی عدالت میں جائیں گے۔ شواہد ہونے کے باوجود عالمی عدالت کیوں نہ جاتے۔؟ جبکہ ہم تمام اداروں سے مشاورت کے بعد عالمی عدالت گئے۔ انہوں نے کہا کہ عالمی عدالت میں بھارت نے بھی ایڈہاک جج نہیں لگایا جبکہ عدالت میں بھارت کا مستقل جج موجود ہے اور سماعت کیلئے 5 دن کا موقع ملا۔ عالمی عدالت میں بھرپور انداز میں کیس لڑا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

سپریم کورٹ, کے دو رکنی بینچ نے, اورنج لائن میٹرو, منصوبے کے, مقدمے کی, سماعت

سپریم کورٹ کے دو رکنی بینچ نے اورنج لائن میٹرو منصوبے کے مقدمے کی سماعت

اسلام آباد: جسٹس گلزار نے اورنج ٹرین منصوبے کی رفتار پر پراجیکٹ ڈائریکٹر فضل حلیم …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے