امریکا میں کورونا کی ویکسی نیشن لازمی نہیں

امریکا میں کورونا کی ویکسی نیشن لازمی نہیں

امریکا: جوبائیڈن نے کہا کہ امریکا میں کورونا کی ویکسی نیشن لازمی نہیں ہوگی اور کسی بھی شہری کو مجبور نہیں کیا جائے گا کہ وہ ویکسین لگوائے

نومنتخب صدر جوبائیڈن نے کہا کہ وہ اس بات کی بھی توقع کرتے ہیں کہ 20 جنوری کو صدر کی حلف برداری کی تقریب کورونا وائرس کے باعث پرہجوم نہیں ہوگی۔
انہوں نے کہا کہ اقتدار میں آکربطور صدر ہر وہ چیز کروں گا جس سے لوگوں کی درست چیزیں کرنے کے لیے حوصلہ افزائی ہو اور جب لوگ اچھی چیز کریں تو اس کا اظہار کریں کیونکہ یہ اہمیت رکھتا ہے۔
جوبائیڈن کی جانب سے یہ بیان ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب امریکی سینٹر فار ڈیزیز کنٹرول نے پہلی مرتبہ ماسک کو انتہائی لازمی قرار دیتے ہوئے گھروں کے اندر بھی شہریوں کو ماس پہننے کی ہدایت کی ہے۔
امریکی سینٹر فار ڈیزیز کنٹرول کاکہنا ہےکہ امریکا وائرس کے ہائی لیول ٹرانسمیشن کے مرحلے میں داخل ہوگیا ہے۔
جمعہ کے روز امریکا میں کورونا سے 2500 اموات ہوئیں اور 2 لاکھ 25 ہزار نئے مریض سامنے آئے جس کے بعد امریکا میں کورونا سے اموات کی تعداد 2 لاکھ 78 ہزار ہوگئی ہے جب کہ کل مریض 14.3 ملین تک جا پہنچے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

امریکہ میں صدارتی انتخابات کے بعد افغانستان میں امن عمل کے حوالے سے کئی سوالات

امریکہ میں صدارتی انتخابات کے بعد افغانستان میں امن عمل کے حوالے سے کئی سوالات

افغانستان : بظاہر ایسا لگ رہا ہے کہ صدر ٹرمپ جنوری میں وائٹ ہاؤس سے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے