ڈینئل پرل قتل کیس میں سندھ حکومت کےوکیل فاروق نائیک نے التوامانگ لیا

ڈینئل پرل قتل کیس میں سندھ حکومت کےوکیل فاروق نائیک نے التوامانگ لیا

اسلام آباد: سپریم کورٹ میں جسٹس مشیر عالم کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے ڈینئل پرل قتل کیس کی سماعت کی ، سندھ حکومت کےوکیل فاروق نائیک نے التوامانگ لیا

جس پر جسٹس مشیر عالم نے استفسار کیا کیا حکومت سندھ اپنا کیس چلانا نہیں چاہتی، حکومت سندھ کی ذمےداری ہے کہ مقدمہ چلائے، یہ سندھ حکومت کا اپنا دائر کردہ کیس ہے۔
جسٹس قاضی امین نے ریمارکس میں کہا کسی کوشرمندہ کرنا مقصد نہیں، مقدمہ چلنا ضروری ہے تاکہ فیصلہ ہو، سندھ حکومت ہائیکورٹ میں مقدمہ ہارچکی ہے۔
جسٹس مشیرعالم کا کہنا تھا کہ ہم کھلے ذہن سے کیس سننے کے لیے بیٹھےہیں، ،ڈینئل پرل کےورثاکےوکیل نے مؤقف میں کہا اپیل پراسیکیوٹر جنرل سندھ نےدائر کی، اپیل دائر کرنے کے بعد فاروق نائیک کو وکیل کیا گیا۔
عدالت نے کیس کی سماعت فاروق ایچ نائیک کی التواکی تحریری درخواست پر 4 ہفتےکے لیے ملتوی کردی ، درخواست میں کہا گیا فاروق نایئک کمر کی تکلیف میں مبتلا ہیں،میڈیکل سرٹیفکیٹ منسلک ہے۔

یہ بھی پڑھیں

پی ڈی ایم کے جلسوں سے عمران خان کی حکومت نہیں جائے گی

پی ڈی ایم کے جلسوں سے عمران خان کی حکومت نہیں جائے گی

اسلام آباد: وزیرریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کے جلسوں سے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے