بھارتی افراد نے ٹیرس لیوس پر نورا فتیحی کا جنسی استحصال کرنے کا الزام لگایا

بھارتی افراد نے ٹیرس لیوس پر نورا فتیحی کا جنسی استحصال کرنے کا الزام لگایا

انڈیا :مراکشی نژاد کینڈین ڈانسر نورا فتیحی نے بھارتی ڈانسر و کوریوگرافر ٹیرنس لیوس کی جانب سے ریئلٹی شو کے دوران نامناسب حرکت کرنے پر خاموشی توڑتے ہوئے واقعے کی وضاحت کردی

گزشتہ چند دن سے بھارتی سوشل میڈیا پر نورا فتیحی اور ٹیرنس لیوس کی ایک مختصر ویڈیو وائرل ہوئی تھی۔
ویڈیو ریئلٹی شو (ڈانس انڈیا ڈانس) کی تھی، جس میں نورا فتیحی کو اداکارہ ملائیکا اروڑا کی جگہ کاسٹ کیا گیا تھا۔
ملائیکا اروڑا کو کورونا کی وجہ ڈانس انڈیا ڈانس سے کچھ وقت الگ ہونا پڑا اور اسی دوران عارضی طور پر نورا فتیحی کو کاسٹ کیا گیا۔
ڈانس انڈیا ڈانس شو کے دوران ایک موقع پر نورا فتیحی اور ٹیرس لیوس ایک ساتھ سامعین کا شکریہ ادا کرتے ہیں، جس دوران مرد ڈانسر عرب خاتون ڈانسر کے جسم پر بظاہر غیر ارادی طور پر نامناسب طریقے سے ہاتھ پھیرتے ہیں۔
ڈانسر و کوریوگرافر ٹیرس لیوس نے نورا فتیحی کے ساتھ مذکورہ پروگرام کی تصویر بھی شیئر کی، جس میں وہ عرب ڈانسر کو گوڈ میں اٹھائے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔
تصویر شیئر کیے جانے اور ویڈیو وائرل ہونے پر بھارتی افراد نے ٹیرس لیوس پر نورا فتیحی کا جنسی استحصال کرنے کا الزام لگایا۔

یہ بھی پڑھیں

زینڈیا بین الاقوامی ایمی ایوارڈ جیتنے والی سب سے کم عمر ترین اداکارہ

زینڈیا بین الاقوامی ایمی ایوارڈ جیتنے والی سب سے کم عمر ترین اداکارہ

امریکا: ایمی ایوارڈ کو امریکا میں ٹیلی ویژن کی دنیا کا سب سے معتبر ترین …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے