شوگر ملز کیخلاف تحقیقات 90 روز میں مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے

شوگر ملز کیخلاف تحقیقات 90 روز میں مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے

لاہور: لاہور ہائی کورٹ میں جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے العریبیہ شوگر ملز کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ وفاقی حکومت نے چینی کی قلت پر 16 مارچ کو انکوائری کمیشن تشکیل دیا،

درخواست گزار کا کہنا تھا کہ شوگر ملز کی طرف سے ایک ارب روپے سے زائد شریف فیڈ ملز اور شریف ڈیری فارمز کو منتقل کرنے کا الزام بھی عائد کیا گیا، شوگر ملز کیخلاف تحقیقات 90 روز میں مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔
درخواست میں کہا گیا وفاقی کابینہ نے العریبیہ شوگر ملز کیخلاف انکوائری کرنے کا غیر قانونی حکم دیا، جے آئی ٹی کی جانب سے العریبیہ شوگر ملز سے ریکارڈ طلبی کے نوٹس غیر قانونی ہیں۔
درخواست گزار نے استدعا کی کہ العریبیہ شوگر ملز کیخلاف وفاقی حکومت کے انکوائری کے احکامات کو غیر قانونی قرار دے کر کالعدم کیا جائے۔ طلبی کے نوٹسز معطل اور ہراساں کرنے سے روکا جائے۔
عدالت نے ایف آئی اے کو شہباز شریف خاندان کی العریبیہ شوگر ملز کیخلاف کارروائی سے روکتے ہوئے وفاقی حکومت سے 18 ستمبر کو جواب طلب کر لیا۔

یہ بھی پڑھیں

نیب احتساب کا نہیں،پولیٹیکل انجینئرنگ کا ادارہ ہے

نیب احتساب کا نہیں،پولیٹیکل انجینئرنگ کا ادارہ ہے

لاہور: رانا ثناءاللہ نے کہا ہے کہ نیب احتساب کا نہیں،پولیٹیکل انجینئرنگ کا ادارہ ہے،چیئرمین …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے