اگر پائیدار فیصلے اور پالیسی ہوتی تو آج لوگوں پر مہنگی بجلی اور گیس کا بوجھ نہ ڈالتے

اگر پائیدار فیصلے اور پالیسی ہوتی تو آج لوگوں پر مہنگی بجلی اور گیس کا بوجھ نہ ڈالتے

اسلام آباد: سردیوں میں گیس کے بحران کے علاوہ کئی مشکلات ہیں اور ملک کو درپیش مسائل کو سامنے رکھ کر بحث و مباحثہ کرنا ہوگا

وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ ملک میں 27 فیصد شہریوں کو گیس ملتی ہے جبکہ باقی ایل پی جی سلنڈر استعمال کرتے ہیں اور میں بھی ایل پی جی استعمال کرتا ہوں۔
انہوں نے کہا ایل پی جی کی قدر عام گیس کے گھریلو صارفین کے مقابلے میں 4 گنا زیادہ ہے۔
عمران خان نے کہا کہ سبسڈی کے دو مقصد ہوتے ہیں، غریب طبقے کو مالی تعاون فراہم کرنا اور پسماندہ علاقے جہاں زندگی کی بنیادی ضروریات نہ پہنچ سکی ہوں۔
وزیراعظم نے کہا کہ جبکہ پاکستان میں سبسڈی ان لوگوں کو مل رہی جو پہلے ہی طاقتور طبقہ ہے۔
انہوں نے آئی پی پی کے ساتھ از سر نو معاہدے کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ میں ان کا شکر گزار ہوں اور اگلے ہفتے عوام کو مذکورہ معاہدے کی تفصیلات پیش کی جائیں جس سے انداز ہوگا کہ نئے معاہدے کے تحت ان پر کتنا کم بوجھ بڑے گا۔
وزیراعظم عمران خان نے سیمینار میں آئندہ کے لائحہ عمل سے متعلق بحث و مباحثہ کو موثر قرار دیا۔
انہوں نے کہا کہ قدرتی گیس کے نتائج بتدریج کم ہورہے ہیں اس لیے ایسے حالات میں توانائی کے متبادل ذرائع پر بحث و مباحثہ بہت ضروری ہے تاکہ آئندہ برسوں میں ملک کو ایسے مسائل کا سامنا نہ ہو جو آج ہمیں ہیں۔
عمران خان نے امید ظاہر کی کہ سیمینار کے آخر میں آگےکے لائحہ عمل سے متعلق اتفاق رائے پیدا ہو جو ہمارے لیے رہنمائی کی راہ پیدا کرے۔
ان کا کہنا تھا کہ جب کسی مسئلے پر بحث و مباحثہ ہو اور نہ ہی اتفاق رائے جنم لے سکے تو تفریق پیدا ہوتی ہے اور پھر میڈیا کو جو معلومات ملتی ہو وہ اسے استعمال کرتا ہے۔
وزیراعظم عمران خان نے کہا چین نے قومی سطح پر ترجیح بنیاد پر اپنے مسائل کا ادراک کیا اور ان کے حل کے لیے حکمت عملی تیار کیا۔
انہوں نے اس خدشے کا اظہار کیا کہ موسم سرما میں گیس کی لوڈشیڈنگ کا بڑا مسئلہ سامنے آئے گا جبکہ آئندہ برس موسم سرما میں گیس کی کمی ایک بحران بن جائے گا۔
ان کا کہنا تھا کہ گیس کی کمی کو پورا کرنے کے درآمدی گیس کو موجودہ ٹیرف میں فروخت ہی نہیں کرسکتے اس لیے ابھی سے گیس سیکٹر پر گردشی قرضہ شروع ہوگیا جو ماضی میں نہیں تھا۔

یہ بھی پڑھیں

نواز شریف کے اے پی سی سے خطاب کو روکنے لیے قانونی طریقہ کار پر غور

نواز شریف کے اے پی سی سے خطاب کو روکنے لیے قانونی طریقہ کار پر غور

اسلام آباد: اب اس معاملے پر وفاقی حکومت بھی میدان میں آ گئی ہے اور …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے