نور ولی محسود کو اقوام متحدہ نے داعش اورالقاعدہ کی فہرست میں شامل کر لیا

نور ولی محسود کو اقوام متحدہ نے داعش اورالقاعدہ کی فہرست میں شامل کر لیا

اقوام متحدہ: کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے رہ نما نور ولی محسود کو اقوام متحدہ کی داعش اورالقاعدہ کی فہرست میں شامل کر لیا گیا ہے اور اس کے اثاثے منجمد کر کے اس پر سفری پابندیاں عائد کر دی گئی ہیں

کالعدم تحریک طالبان پاکستان نے ملا فضل اللہ کی ہلاکت کے بعد جون 2018 میں مفتی نور ولی محسود کو تنظیم کا نیا سربراہ منتخب کیا تھا۔
امریکی محکمہ خزانہ نے بھی ستمبر 2019 میں پاکستان میں ہونے والے دہشت گردوں حملوں میں ملوث ہونے پر کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے امیر کو مفتی نور ولی محسود کو عالمی دہشت گرد قرار دیتے ہوئے ان کے تمام اثاثے منجمند کرنے کا حکم دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

افغان جنگ کے خاتمے میں پاکستان کا اب پہلے سے زیادہ اہم کردار ہے

افغان جنگ کے خاتمے میں پاکستان کا اب پہلے سے زیادہ اہم کردار ہے

واشنگٹن: ولیم ای ٹوڈ، جنہیں رواں سال کے آغاز میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے