یہ بات یقینی نہیں لگتی کہ سائنس دان کروناوائرس کے خلاف مؤثر ویکسین تیار کرلیں

یہ بات یقینی نہیں لگتی کہ سائنس دان کروناوائرس کے خلاف مؤثر ویکسین تیار کرلیں

جنیوا: رپورٹ کے مطابق اپنے ایک بیان میں ڈبلیو ایچ او کے سربراہ کا کہنا تھا کہ حتمی طور پر کروناویکسین سے متعلق رائے قائم نہیں کی جاسکتی، اگر کوئی ویکسین تیار بھی ہوتی ہے تو اس کے لیے سال لگے گا، وبا کے خلاف علاج کی دریافت پر کام جاری ہے

رپورٹ کے مطابق ویڈیو کانفرنس کے ذریعے یورپی پارلیمیٹ کے ہیلتھ کمیٹی سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر ٹیڈروس نے کہا کہ اگر ویکسین کی تیاری حقیقت ثابت ہوتی ہے تو یہ پوری دنیا کے لیے قابل استعمال ہوگی۔
ان کا کہنا تھا کہ ابھی ویکسین کے حصول کو حقیقت کہنا بہت مشکل ہے، امید ہے کہ ماہرین علاج دریافت کرلیں، عالمی ادارہ صحت سے منسلک 100 کمپنیاں ویکسین کی تیاری پر کام کررہی ہیں، جن میں سے ایک حتمی اور فائل مرحلے میں داخل ہوچکی ہے، ویکسین کی تیاری کی رفتار بڑھا دی جائے تب بھی کافی وقت لگے گا۔

یہ بھی پڑھیں

ریاست جارجیا کے حراستی مراکز میں قید خواتین کے ’رحم مادر‘ نکالے جانے کا اسکینڈل

ریاست جارجیا کے حراستی مراکز میں قید خواتین کے ’رحم مادر‘ نکالے جانے کا اسکینڈل

امریکا: اسکینڈل اس وقت سامنے آیا جب ریاست جارجیا کی ارون کاؤنٹی کے ایک حراستی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے