نازیبا الفاظ کے استعمال پر اسپیکراسد قیصرکا سخت نوٹس

نازیبا الفاظ کے استعمال پر اسپیکراسد قیصرکا سخت نوٹس

اسلام آباد: قومی اسمبلی اجلاس کے دوران اسپیکر اسد قیصر نے ناراضی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایوان میں نازیبا زبان استعمال کی گئی ، سر شرم سے جھک گیا ،ایک پارٹی نہیں پورے ایوان کا اسپیکرہوں ،نامناسب زبان استعمال کرنے پرایوان سے باہر اوررکنیت معطل کرسکتا ہوں

اسد قیصرنے کہا کہ بعض ارکان نے ایسے الفاظ کہے جس پر پورے ایوان کی توہین ہوتی ہے ، گزشتہ کئی دنوں میں پارلیمنٹرین کے ادا الفاظ پرشرم محسوس ہورہی ہے،گزشتہ روزعبدالقادر پٹیل نے بھی تقدس اور وقار کے منافی الفاظ استعمال کئے ،معاملےکی ویڈیوکا جائزہ لےکر کر کارروائی کریں گے۔
معاملے پرپیپلزپارٹی اراکین نے اسپیکر کی توجہ حکومتی اراکین کی جانب کرواتے ہوئے کارروائی کا مطالبہ کیا تو اسد قیصر نے کہا کہ حکومتی ارکان حقائق پرجواب دیں لیکن عزتوں پرحملہ نہ کریں۔
حکومت اراکین نے بھی بھی کاروائی کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ کسی کو کسی کی بھی تضحیک نہیں کرنی چاہیئے ،چور،ڈاکواورنااہل کے الفاظ ختم ہونے چاہئیں۔
حکومتی رکن نے کورونا میں اکسیجن سیلینڈرنہ ملنے کا شکوہ کیا تو ریاض مزاری نے جنوبی پنجاب میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ کا مسئلہ اٹھاتےہوئے گیس کی فراہمی کا مطالبہ کیا ۔
بابراعوان نے کہا کہ رولزکے مطابق تنقید کی جاسکتی ہے،لیکن کسی کی تذلیل کی اجازت نہیں

یہ بھی پڑھیں

وفاقی دارالحکومت میں بڑھتے ہوئے جرائم کے خلاف کیسز کی سماعت

وفاقی دارالحکومت میں بڑھتے ہوئے جرائم کے خلاف کیسز کی سماعت

اسلام آباد: شہزاد اکبر، سیکرٹری داخلہ نسیم کھوکھر، ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات، آئی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے