آئی جی خیبر پختونخوا کی تعیناتی، پی ٹی آئی کی زرین ضیاء نے اپنی ہی حکومت کی مخالفت کردی

پشاور: پاکستان تحریک انصاف کی اپنی ہی رکن صوبائی اسمبلی نے آئی جی کی تعیناتی کی مخالفت کردی ہے۔تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی سماء سے گفتگو کرتے ہوئے پی ٹی آئی کی رکن صوبائی اسمبلی اور پارلیمانی سیکرٹری زرین ضیاء نے آئی جی خیبر پختونخوا کی تعیناتی کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے کہا کہ نئے آئی جی کی تعینائی میں میرٹ کی خلاف ورزی کی گئی ہے اور کے پی کے حکومت میرٹ کے نعرے کی پاسداری کرے۔

 

زرین ضیاء نے اپنے بیان میں کہا کہ ہم جب میرٹ کی بات کرتے ہیں تو پھر میرٹ ہونا چاہیے،سینئر افسران کی موجودگی میں جونیئر کی آئی جی کیلئے سفارش کرنا میرٹ کی خلاف ورزی ہے۔یاد رہے کہ کے پی کے حکومت نے آئی جی ناصر درانی کی ریٹائرمنٹ کے بعد صلاح الدین محسود کو نیا آئی جی تعینات کیا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

واقعے, کے تین سال, کے بعد صوبائی, پولیس نے تسلیم کیا کہ, ان لڑکیوں, کو قتل, کیا گیا ہے

واقعے کے تین سال کے بعد صوبائی پولیس نے تسلیم کیا کہ ان لڑکیوں کو قتل کیا گیا ہے

خیبر پختونخوا: سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے لڑکیوں کے ڈانس کی ویڈیو منظر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے