جعلی بھرتیوں میں ملوث محکمہ تعلیم کے 2 افسران گھوٹکی سے گرفتار

جعلی بھرتیوں میں ملوث محکمہ تعلیم کے 2 افسران گھوٹکی سے گرفتار

کراچی: اینٹی کرپشن گھوٹکی سرکل کی ایک ٹیم نے انسپکٹر ایاز میمن کی سربراہی میں کارروائی کرتے ہوئے جعلی بھرتیوں اور سرکاری ریکارڈ میں ہیر پھیر میں ملوث تعلقہ ایجوکیشن افسر اوباڑو اللہ بچایو قاضی گریڈ 18 اور سابق تعلقہ ایجوکیشن افسر اللہ ورایو چاچڑ کو گرفتارکرکے ان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا

جبکہ تیسرا ملزم اختر حسین دھاندو مفرور بتایا جاتا ہے، ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہے۔
صوبائی وزیر اینٹی کرپشن ، صنعت وتجارت اور محکمہ امداد باہمی جام اکرام اللہ دھاریجو نے کہا ہے کہ کرپشن میں ملوث افراد کے خلاف کارروائیوں کا دائرہ وسیع کررہے ہیں اور کرپشن سے متعلق شکایات پر فوری کارروائی کی جارہی ہے انھوں نے کرپشن میں ملوث افراد کو خبردار کیا کہ وہ اپنی حرکتوں سے باز آجائیں اور اپنے فرائض ایمانداری سے انجام دیں بصورت دیگر ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں

کے الیکٹرک نے نیپرا کی عوامی سماعت کے بعد شہریوں کو مزید تنگ کرنا شروع کردیا

کے الیکٹرک نے نیپرا کی عوامی سماعت کے بعد شہریوں کو مزید تنگ کرنا شروع کردیا

کراچی: کے الیکٹرک نے شدید گرمی کے موسم میں بھی شہرکے متعدد علاقوں میں 3 …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے