گجراتی نیوز ویب سائٹ کے ایڈیٹر پر ملک بغاوت کا الزام عائد

گجراتی نیوز ویب سائٹ کے ایڈیٹر پر ملک بغاوت کا الزام عائد

بھارت: 7 مئی کو شائع ہونے والے اس آرٹیکل میں مبینہ طور پر یہ دعوی کیا گیا تھا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے اعلی رہنما ریاست میں وجے روپانی کے کوروناوائرس بحران سے نمٹنے کے لیے اٹھائے گئے اقدامات سے نالاں ہیں

کہا گیا تھا کہ بی جے پی کی اعلیٰ قیادت نے منسوک مانڈاویہ کو گجرات کی قیادت میں تبدیلی پر تبادلہ خیال کرنے کے لیے بلایا ہے تاہم منسوک مانڈاویہ نے ان افواہوں کی تردید کردی تھی۔
دھول پٹیل کے خلاف یہ مقدمہ احمد آباد کرائم برانچ نے بھارتی ضابطہ اخلاق کی دفعہ 124 (اے) کے تحت درج کیا جو ملک سے بغاوت اور ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایکٹ سے متعلق ہے۔
حمد آباد کرائم برانچ کے اسسٹنٹ کمشنر بی وی گوہل نے کہا کہ دھول پٹیل کو حراست میں لیا گیا تھا اور انہیں گرفتار نہیں کیا گیا جس کے بعد احتیاطی تدابیر کے طور پر انہیں کورونا وائرس کے ٹیسٹ کے لیے ہسپتال بھیج دیا گیا۔
انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ کے خلاف فیس آف نیشن میں آرٹیکل بغیر کسی ثبوت کے شائع کیا گیا تھا۔
انہوں نے مزید کہا کہ بے بنیاد خبریں ایسے وقت میں عدم استحکام اور خوف کی فضا کا باعث بنتی ہیں جب بھارت وبائی مرض کا مقابلہ کررہا ہے۔
جب ان سے پوچھا گیا کہ کیا دوسرے خبر رساں ادارے جنہوں نے اس آرٹیکل کو شائع کیا کے خلاف بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے تو ان کا کہنا تھا کہ ‘صرف ایک ملزم ہے اور وہ دوسروں پر تفتیش کررہے ہیں‘۔

یہ بھی پڑھیں

کرونا وائرس ٹیسٹ کے لیے گئے وقت پر دو بار نہ جانے پر تیسری بار بکنگ دو ہفتے تک نہیں ملے گی

کرونا وائرس ٹیسٹ کے لیے گئے وقت پر دو بار نہ جانے پر تیسری بار بکنگ دو ہفتے تک نہیں ملے گی

ریاض: سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے