پتہ لگایا جائے اربوں کا راشن کہاں گیا…..؟

کراچی : حلیم عادل شیخ نے کہا ہے کہ وزیر اعلی سندھ نے خوف کیوں پھیلایا اس کی بھی تحقیقات ہونی چاہیے۔

حلیم عادل شیخ نے کہا ہے کہ ہم سندھ حکومت کی جانب سے اربوں کے راشن کی تقسیم کی تحقیقات کے لیئے پیٹیشن دائر کرینگے۔

حلیم عادل شیخ نے کہا کہ ایف آئی اے کو دائرہ تحقیقات بڑھانا چاہیے کہ اربوں کا راشن کہاں گیا، وہ بھی پتہ لگایا جائے۔
وزیر اعلی سندھ نے خوف کیوں پھیلایا اس کی بھی تحقیقات ہونی چاہیے۔لاک ڈاؤن کے نام پر اربوں کا راشن کہاں تقسیم ہوا کس کی مدد کی گئی…..؟

انہوں نے کہا کہ ایف آئی اے مکمل انکوائری کرے کہ کون قصور ہے کچھ تو تھا جس کہ وجہ سے اتنا شور مچایا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی کے رہنماؤں نے اپنے ٹوئیٹس میں ہمارے کپتان اور وفاقی حکومت کے خلاف گھٹیا زبان استعمال کی ہے۔ پیپلزپارٹی کے لوگوں کو اپنے گریبان میں پہلے دیکھنا چاہیے۔ شہر کراچی میں آپ لوگوں پر بہت سے الزامات ہیں۔

عادل شیخ نے مرتضیٰ وہاب کے الزامات پر ردعمل میں کہا ہے کہ مشیر برائے ڈس انفارمیشن مرتضیٰ وہاب نے ایف آئی اے کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ سوشل میڈیا پر تاجروں کی آڈیو کے بارے میں تحقیقات کی جائے۔

پی ٹی آئی رہنماء نے کہا کہ اس کے لئے ہم بھی خط لکھ رہے ہیں اور پٹیشن بھی کریں گے تاکہ اصل حقائق سامنے آئیں۔ سارے معاملے پر جی آئی ٹی بننی چاہییے تاکہ دودھ کا دودھ پانی کا پانی واضح ہوجائے۔

یہ بھی پڑھیں

لی مارکیٹ میں عوام کیلئے سہولیات سے لیس نئے بیت الخلا قائم

لی مارکیٹ میں عوام کیلئے سہولیات سے لیس نئے بیت الخلا قائم

کراچی: بیت الخلا دو خواتین کے لیے اور دو مردوں کے لیے پاکستان کے پہلے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے