ملک میں سونے کی فی تولہ قیمت ایک لاکھ روپے سے تجاوز

ملک میں سونے کی فی تولہ قیمت ایک لاکھ روپے سے تجاوز

کراچی: کورونا وائرس کے باعث ملک میں جیولری کی دکانوں سمیت مقامی مارکیٹس شٹ ڈاؤن ہیں اور اسی وقت سے مقامی بلین باڈی ‘اندازے سے صرف قیمتیں’ بتانے کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہیں

صدر اے ایس ایس جے اے ہاروس رشید چاند کا کہنا تھا کہ ایسوسی ایشن عالمی صرافہ مارکیٹس کی بنیاد پر مقامی سطح پر قیمتوں کو اپ ڈیٹ کر رہی ہے۔
انہوں نے دعویٰ کیا کہ ملک بھر میں تمام صرافہ تاجروں کے درمیان ہفت روزہ یا ماہانہ زبانی ڈیلنگ کی جارہی ہے۔
ہارون رشید کا کہنا تھا کہ ایسوسی ایشن صارفین کے درمیان قیمتوں میں اضافے کے بارے میں آگاہی فراہم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے تاکہ وہ سونے ڈیلنگ کے دوران وہ محتاط رہ سکیں۔
وفاقی حکومت نے ملک میں جزوی لاک ڈاؤن کو 30 اپریل تک بڑھادیا ہے، اس اقدام سے جیولری سمیت تمام مارکیٹس میں تجارتی سرگرمیوں پر اثر پڑا ہے۔
یہی نہیں بلکہ اس وقت بڑے پیمانے پر شادیوں کی تقریبات پر پابندی ہے اور زیادہ تر شادیاں گھروں میں ہورہی ہیں۔ علاوہ ازیں اس عالمی وبا ک کم ہونے کے کوئی اثار نہ نظر آنے کے بعد سے شادی ہالز کی بکنگ رمضان کے دوران تک بند ہوگی۔
تمام صورتحال کے بعد جیولرز یقینی طور پر تجارتی نقصان برداشت کر رہے اور رمضان سے پہلے شادیوں کے سیٹ کے لیے آنے والے ایڈوانس آرڈر مسلسل کم ہورہے ہیں۔
اس حوالے سے چیئرمین آل پاکستان جیولرز ایسوسی ایشن (اے پی جے اے) محمد ارشد کا کہنا تھا کہ عالمی مارکیٹوں میں آن لائن سونے کی تجارت فروغ پارہی ہے کیونکہ مشکل وقت میں سونے کو محفوظ تصور کیا جاتا ہے۔
پاکستان میں آن لائن سونے کی تجارت بمشکل ایک سے 2 فیصد ہے اور تجارت ایک تولہ یا اس سے زیادہ کے بجائے 5 گرام سے کم میں کی جاتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

ماہرین کے مطابق شرح سود میں نمایاں کمی کا امکان

ماہرین کے مطابق شرح سود میں نمایاں کمی کا امکان

کراچی :عالمی معیشت کرونا کے شکنجے میں جانے کے بعد شرح سود میں کمی کا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے