پاکستانی تاریخ میں معاشرتی تحفظ کاسب سے بڑا منصوبہ ہے

پاکستانی تاریخ میں معاشرتی تحفظ کاسب سے بڑا منصوبہ ہے

واشنگٹن: امریکی نشریاتی ادارے رپورٹ میں لکھا کہ پاکستان نےاپنی تاریخ میں معاشرتی تحفظ کا سب سے بڑاپروگرام شروع کردیا ہے، کورونا وائرس کےدوران لاک ڈاؤن کا مقابلہ کرنے کیلئے پاکستان اپنے غریب شہریوں میں تقریباً ایک ارب ڈالر تقسیم کرے گا

سی این این نے لکھا ثانیہ نشتر کے مطابق منصوبے کے تحت ایسے شہریوں کی مدد تک پہنچاجائےگا جوموجودہ حالات میں سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔ منصوبے کے تحت ایک کروڑ بیس لاکھ خاندانوں کی مدد کی جائےگی تاکہ وہ اشیائے خورونوش حاصل کرسکیں۔
سی این این نے لمز کے پروفیسر کا حوالہ دیتے ہوئے کہا اتنے بڑے منصوبےکی تکمیل کیلئے پاکستان کا فلاحی ڈھانچہ پاکستان کو دیگر ترقی پذیرممالک کے مقابلے میں زیادہ فائدہ دے گا۔
سی این این نے لکھا ایک سینئر صحافی نےپروگرام اہم قراردیا اور کہا پاکستان میں غریب روزانہ کی بنیاد پر کماتے اور خرچہ چلاتے ہیں، جس دن ان کی کمائی نہیں ہوتی اس دن کو کھانا نہیں ملتا، پروگرام اگرکامیابی سےپایہ تکمیل تک پہنچا تویہ ان لوگوں کونہایت ضرورت مدد فراہم کرے گا۔
احساس ایمرجنسی کیش پروگرام کےتحت مستحقین کیلئے ادائیگیوں کاآغاز کیا گیا تھا ، پروگرام کےتحت ایک کروڑ بیس لاکھ خاندانوں کو ماہانہ بارہ ہزار روپے دیئے جا رہے ہیں، پروگرام میں ملک بھرکےمستحقین میں 144 ارب روپےتقسیم کئےجائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں

عدالتی حکم پر عمل درآمد نہ کرنے والے افسران کی نشاندہی کریں

عدالتی حکم پر عمل درآمد نہ کرنے والے افسران کی نشاندہی کریں

اسلام آباد: چار سال سے لاپتہ آئی ٹی انجئنیر ساجد محمود کی بازیابی کے لیے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے