حکومت نے ہر قسم کی ملکی پروازوں کی معطلی کا دورانیہ 2 اپریل سے بڑھا کر 11 اپریل کردیا

حکومت نے ہر قسم کی ملکی پروازوں کی معطلی کا دورانیہ 2 اپریل سے بڑھا کر 11 اپریل کردیا

راولپنڈی: ایوی ایشن ڈویژن کے ترجمان اور سینئر جوائنٹ سیکریٹری عبدالستار کھوکھر نے ایک پریس ریلیز میں کہا کہ حکومت نے ہر قسم کی ملکی پروازوں کی معطلی کا دورانیہ 2 اپریل سے بڑھا کر 11 اپریل کردیا ہے

اسلام آباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ سے گلگت اور اسکردو ایئرپورٹس تک پروازوں کی آمدو رفت معمول کے مطابق جاری رہے گی۔
ان کا کہنا تھا کہ اس پابندی سے صرف سفارتی، خصوصی/مال بردار پروازوں اور پی آئی اے کو پھنسے ہوئے مسافروں کو لانے یا لے جانے کے لیے متعلقہ حکام کے خصوصی اجازت نامے کے ساتھ استثنیٰ حاصل ہے۔
مسافروں کو قائم کردہ طریقہ کار کے مطابق چیکنگ اور اسکریننگ یا طبی ماہرین کی تجویز پر ٹیسٹنگ، آئیسولیشن یا قرنطینہ کے عمل سے گزرنا ہوگا۔
حکومت نے پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن کو جزوی طور پر فلائیٹ آپریشن بحال کرنے کی اجازت دے دی۔
پی آئی اے ترجمان عبداللہ حفیظ نے ایک پریس ریلیز میں کہا کہ پہلے مرحلے میں محدود تعداد میں مسافروں کو واپس لایا جائے گا تا کہ نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ سائنسز کی گنجائش کے مطابق ان کے ٹیسٹس کیے جاسکیں۔
کینیڈا اور برطانیہ کے لیے پروازیں کراچی، لاہور اور اسلام آباد ایئرپورٹس سے اڑان بھریں گی، ٹورنٹو کے لیے پرواز 3 اپریل جبکہ برطانیہ کی پرواز 4 اپریل سے بحال ہوجائے گی۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ پروازوں کی معطلی کے باعث پھنسے والے مسافروں کو ترجیح دی جائے گی اور تمام پروازیں صرف اسلام آباد ایئرپورٹ پر واپس آئیں گی۔
پی آئی اے نے بتایا کہ تمام مسافروں کی آمد پر ان کا ٹیسٹ یا اسکیننگ کی جائے گی اور تمام مسافروں کو 6 گھنٹوں کے لیے اسلام آباد کے ایک ہوٹل میں ٹھہرایا جائے گا۔
جو مسافر اسکیننگ میں کلیئر قرار دیے جائیں گے انہیں گھروں کو بھجوادیا جائے گا جبکہ متاثرہ مریضوں کو قرنطینہ میں منتقل کردیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں

نیپرا بجلی کے نرخوں میں ایک روپے 62 پیسے اضافے کی منظوری

نیپرا بجلی کے نرخوں میں ایک روپے 62 پیسے اضافے کی منظوری

اسلام آباد: نیپرا کے ایک ترجمان نے کہا کہ ریگولیٹر کے نئے نرخ وفاقی حکومت …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے