نواز شریف کی ’تازہ‘ طبی رپورٹس کو ناکافی قرار دے دیا

نواز شریف کی ’تازہ‘ طبی رپورٹس کو ناکافی قرار دے دیا

14 لاہور: رکنی میڈیکل بورڈ نے طبی رپورٹس وزارت داخلہ اور صحت کو کوئی رائے دینے کے لیے ناکافی قرار دے کر واپس کردیں اور نواز شریف کے پلیٹلیٹس کے لیے نئی رپورٹس مانگ لیں

وزیر قانون پنجاب راجا بشارت نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ نواز شریف کی (تازہ) میڈیکل رپورٹس وزارت داخلہ کو موصول ہوگئی ہیں اور پنجاب حکومت اس سلسلے میں فیصلہ کرے گی۔
نواز شریف کے معالج ڈاکٹر عدنان کی کئی خواہشات ہیں لیکن ’ہم ان کی خواہشات کے مطابق فیصلہ نہیں کرسکتے‘۔
انہوں نے کہا کہ حکومت پنجاب نواز شریف کی رپورٹس سے مطمئن نہیں اور اس کے پاس اس ضمن میں عدالت جانے کا آپشن موجود ہے۔
حکومت پنجاب نے نواز شریف سے 31 جنوری تک مزید تفصیلی رپورٹس جمع کروانے کا کہا تھا جس پر عمل نہ ہونے کی صورت میں متعلقہ حکام ان کی درخواست کا فیصلہ دستیاب ریکارڈز کی بنیاد پر کر دیتے۔
عدالت کی جانب سے علاج کے لیے نواز شریف کو بیرونِ ملک قیام کے لیے 4 ہفتوں کی مہلت دی گئی تھی جس کے اختتام پر سابق وزیراعظم نے 23 دسمبر کو قیام میں توسیع کی درخواست کے ساتھ میڈیکل رپورٹس جمع کروائی تھیں جنہیں صوبائی حکومت نے مسترد کردیا تھا۔
مسلم لیگ (ن) نے پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کی جانب سے تازہ رپورٹس طلب کیے جانے کو معاملہ کو سیاسی رنگ دینے کی کوشش قرار دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

ماڈل عظمیٰ خان پر تشدد کا مقدمہ درج

لاہور : اداکارہ عظمیٰ خان اور ان کی بہن ہما خان کو تشدد کا نشانہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے