ایف ڈبلیو او نے آڈیٹر جنرل کو ریکار فراہم کرنے سے انکار

ایف ڈبلیو او نے آڈیٹر جنرل کو ریکارڈ فراہم کرنے سے انکار

اسلام آباد: پبلک اکاؤنٹس کمیٹی (پی اے سی) نے کرتار پور راہداری کے منصوبے کا ریکارڈ آڈیٹر جنرل آف پاکستان کو فراہم نہ کرنے پر ملٹری انجینئرنگ آرگنائزیشن یعنی فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن(ایف ڈبلیو او) سے وضاحت طلب کرتے ہوئے اس کے ڈائریکٹر جنرل کو آئندہ اجلاس میں طب

پی اے سی کے چیئرمین رانا تنویر حسین نے ہدایت کی چونکہ ایف ڈبلیو او نے آڈیٹر جنرل کو ریکارڈ فراہم کرنے سے انکار کردیا ہے اس لیے انہیں اس حوالے سے اپنی پوزیشن واضح کرنے کے لیے (اجلاس میں) آنا چاہیئے۔
پی اے سی کے سیکریٹری کو مزید ہدایت دی کہ ایف ڈبلیو اور کے ڈائریکٹر جنرل کو کمیٹی کے آئندہ اجلاس میں پیش ہونے کا کہا جائے۔
آڈیٹر جنرل جاوید جہانگیر نے کمیٹی کو بتایا تھا کہ پی اے سی کی ہدایت کے مطابق کرتار پور راہداری منصوبے کا آڈٹ کرنے کے لیے آڈیٹرز نے ایف ڈبلیو او کو خط لکھ کر متعلقہ ریکارڈ مانگا تھا۔
انہوں نے بتایا کہ جواب میں ایف ڈبلیو او کے حکام نے کہا چونکہ اس منصوبے کے لیے قومی اقتصادی کونسل کی ایگزیکٹو کمیٹی ابھی تک منتظر ہے اس لیے ایف ڈبلیو او منصوبے کی تفصیلات آڈیٹرز کو فراہم نہیں کرسکتی۔

یہ بھی پڑھیں

نیپرا بجلی کے نرخوں میں ایک روپے 62 پیسے اضافے کی منظوری

نیپرا بجلی کے نرخوں میں ایک روپے 62 پیسے اضافے کی منظوری

اسلام آباد: نیپرا کے ایک ترجمان نے کہا کہ ریگولیٹر کے نئے نرخ وفاقی حکومت …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے