پرویزمشرف نے خصوصی عدالت کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا

پرویزمشرف نے خصوصی عدالت کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا

اسلام آباد: پرویزمشرف نے درخواست میں موقف اختیارکیا کہ میرا بیرون ملک علاج جاری ہے، بیماری کے باعث بسترپر ہوں اورعدالت میں پیش نہ ہوسکا، مجھے شفاف ٹرائل کا حق نہیں دیا گیا

درخواست میں موقف اختیارکیا گیا ہے کہ خصوصی عدالت کے 17 دسمبرکے فیصلے سے غیرمطمئن ہوں، خصوصی عدالت نے ٹرائل مکمل کرنے میں آئین کی 6 بارخلاف ورزی کی، میرے معاملے میں انصاف کا قتل نہ ہو، اس لیے مقررہ قانونی مدت میں اپیل دائرکی۔ پرویز مشرف نے درخواست میں خصوصی عدالت کا سزائے موت کا فیصلہ کالعدم قراردینے کی استدعا کی۔
3 روز قبل لاہور ہائی کورٹ نے سابق صدر جنرل (ریٹائرڈ ) پرویز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس کا فیصلہ سنانے والی خصوصی عدالت کی تشکیل کو کالعدم قرار دے دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

دوبارہ اسلام آباد مارچ کا اعلان کر سکتے ہیں

دوبارہ اسلام آباد مارچ کا اعلان کر سکتے ہیں

ملاکنڈ: جعلی حکمرانوں کی حکومت کا خاتمہ ہو رہا ہے، سارے جیلوں میں چلے جائیں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے