فنڈ میں خردبرد، ایڈیشنل کمشنر شیزار میمن ملازمت سے برطرف

فنڈ میں خردبرد، ایڈیشنل کمشنر شیزار میمن ملازمت سے برطرف

لاہور:انڈس واٹر کمیشن کے مطابق شیراز میمن نے مبینہ طور پر ڈیڑھ کروڑ روپے کی رقم اپنے اکاؤنٹ میں جمع کروائی اور کرپشن کے مبینہ الزام پر انہیں جبری طور پر نوکری سے ریٹائر کر دیا گیا ہے

انڈس واٹر کمشنر مہر علی شاہ نے اس بات کی تصدیق کی کہ وزیراعظم نے سرکاری فنڈز کی خرد برد کی تحقیقات کے لیے کمیٹی تشکیل دی تھی، الزامات ثابت ہونے پر کمیٹی نے شیراز میمن کو ملازمت سے فارغ کرنے کی سفارش کی۔
مہر علی شاہ نے بتایا کہ شیراز میمن کو ملازمت سے فارغ کرنے کا باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

صوبہ پنجاب میں کروناوائرس کے مزید 223 نئے کیسز رپورٹ

صوبہ پنجاب میں کروناوائرس کے مزید 223 نئے کیسز رپورٹ

لاہور: پرائمری اینڈسیکنڈری ہیلتھ کیئر پنجاب نے اپنی تازہ رپورٹ میں کہا ہے کہ گزشتہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے