اسکاٹ لینڈ میں دوبارہ ریفرنڈم نہیں کراؤں گا، بورس جانسن

اسکاٹ لینڈ میں دوبارہ ریفرنڈم نہیں کراؤں گا، بورس جانسن

برطانوی وزیراعظم بورس جانس نے شمالی آئرلینڈ میں علیحدگی کا ریفرنڈم دوبارہ کرائے جانے کی درخواست مسترد کردی ہے۔

قبل از وقت عام انتخابات میں بھاری اکثریت سے کامیابی کے بعد وزیراعظم بورس جانس نے اسکاٹ لینڈ کی فرسٹ منسٹر نکولا اسٹورجن کی جانب سے علاقے کی خود مختاری کے لیے ریفرنڈم دوبارہ کرائے جانے کے مطالبے کی کھل کر مخالفت کی۔ اسکاٹ لینڈ کی فرسٹ منسٹر سے بات چیت کرتے ہوئے بورس جانسن نے اسکاٹ لینڈ کے عوام ، دوہزار چودہ میں کرائے جانے والے ریفرنڈم میں برطانیہ سے علیحدگی کے خلاف ووٹ دے چکے ہیں لہذا وہ دوبارہ ریفرنڈم کرائے جانے کی حمایت نہیں کرسکتے۔انہوں نے کہا کہ ہم سب کو دوہزار چودہ کے ریفرنڈم کے واضح اور شفاف نتیجے کا احترام کرنا چاہیے۔بورس جانسن نے بارہ دسمبر کو کرائے جانے والے قبل از وقت انتخابات کے نتائج کو بریگزٹ کی کامیابی قرار دیتے ہوئے کہا کہ یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی بلا چون و چرا انجام پائے گی۔برطانیہ میں جمعرات کو ہونے والے قبل از وقت عام انتخابات کے ووٹوں کی گنتی مکمل ہوگئی ہے اور وزیراعظم بورس جانس کی قیادت والی کنزرویٹیو پارٹی نے چھے سو پچاس کے ایوان میں تین سو چونسٹھ نشستیں حاصل کرلی ہیں۔

مقبوضہ جولان میں اسرائیل کے اقدامات کی مذمت

یہ بھی پڑھیں

مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان

مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان

ریاض: سعودی محکمہ موسمیات نے امکان ظاہر کیا ہے کہ ریاض، مدینہ منورہ، بریدہ، نجران، …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے