ٹرین کی پٹری پر سیلفی لیتے ہوئے دو نوجوان ہلاک

دارالحکومت نئی دہلی میں دو نوجوان ریلوے پٹری پر سیلفی لیتے ہوئے ٹرین کی زد میں آکر ہلاک ہوگئے۔

نئی دہلی میں سنیچر کے روز نوجوانوں کا ایک گروہ شہر کے مشرقی حصے میں ٹرین کی پٹریوں کے نزدیک سامنے سے آنے والی ٹرین کے ساتھ سیلفی لینے کے لیے گیا تھا۔

لیکن سیلفی لیتے ہوئے دو لڑکے بروقت پٹری سے ہٹنے میں ناکام رہے اور ٹرین کے نیچے کچلے گئے۔

یہ واقع مقامی میڈیا میں منگل کے روز سامنے آیا۔

پولیس اہلکار کا بیان شامل کیا ہے جنھوں نے بتایا کہ لڑکوں نے سامنے سے آنے والی ٹرین کو دیکھتے ہوئے خود کو دوسری جانب کر لیا لیکن وہ دوسری طرف سے آنے والی ٹرین کو نہ دیکھ سکے اور اس کے نیچے آ گئے۔

ریلوے پولیس کے اہلکار نے بتایا کہ ان نوجوانوں نے ان تصاویر کے لیے پروفیشنل کیمرہ کرائے پر لیا تھا۔

ریلوے پولیس کے ڈپٹی کمشنر پرویز احمد نے کہا کہ: ’ہم نے ان لڑکوں کے زیر استعمال کیمرہ ضبط کر لیا ہے۔ ان میں تصاویر اور ویڈیو دونوں شامل ہیں اور ویڈیو کو ہم نے مزید تحقیق کے لیے بھیج دیا ہے۔ تصاویر سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ لڑکے ایک پٹری سے دوسری پٹری پر چھلانگیں لگا رہے تھے۔‘

گذشتہ دو سالوں میں انڈیا میں سیلفی لیتے ہوئے کئی اموات ہوئی ہیں۔ پچھلے سال شائع ہونے والی ایک تحقیق کے مطابق 2014-15 میں دنیا بھر میں سیلفی لیتے ہوئے 127 اموات ہوئی ہیں جن میں سے 76 انڈیا میں ہوئی تھیں۔

ممبئ پولیس نے شہر میں 15 مقامات کو خطر ناک قرار دیا ہے جہاں پر سیلفی لینا ’جان جوکھوں کا کام‘ ہو سکتا ہے۔

پاکستان میں بھی حال ہی میں سیلفی لیتے ہوئے کئی حادثات رونما ہو چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

امریکی سینیٹر کی ایران مخالف پالیسیوں پر نکتہ چینی

امریکی سینیٹر کی ایران مخالف پالیسیوں پر نکتہ چینی

۔ امریکی سینیٹر برنی سینڈرز نے ایران کے خلاف حکومت امریکہ کی جانب سے عائد …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے