آصف زرداری کو ان کے ذاتی معالج سے علاج کروانے کی اجازت دی جائے

آصف زرداری کو ان کے ذاتی معالج سے علاج کروانے کی اجازت دی جائے

اسلام آباد: سینیٹر رحمٰن ملک کا کہنا تھا کہ کمیٹی نے سابق صدر کی صحت کے حوالے سے ازخود نوٹس لیا تھا اور حکومت پر زور دیا تھا کہ آصف زرداری کو ان کے ذاتی معالج سے علاج کروانے کی اجازت دی جائے

30 نومبر کو کمیٹی کے علم میں یہ بات آئی کہ ان کے ذاتی معالج کو میڈیکل بورڈ میں شامل کرلیا گیا تھا۔
ان کا کہنا تھا کہ سابق صدر کے اہلِ خانہ کراچی میں رہتے ہیں ْلہٰذا ان کے خلاف کسی دوسرے شہر میں مقدمہ چلانے کا کوئی قانونی جواز نہیں بنتا۔
سینیٹر پروین کا کہنا تھا کہ دیگر افراد کی طرح آصف زرداری کا علاج نہیں کیا جارہا، انہوں نے مطالبہ کیا کہ ان کے مقدمات کو فوری طور پر کراچی منتقل کیا جائے۔
اجلاس کی سربراہی سینیٹر رحمٰن ملک نے کی تھی جبکہ شرکا میں سیکریٹری داخلہ یوسف نسیم کھوکھر، چیئرمین نادرا عثمان یوسف مبین اور بیورو آف امیگریشن(بی او ای)، اوفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) اور سی ڈے اے کے حکام شامل تھے۔

یہ بھی پڑھیں

بطور چیئرمین یوٹیلٹی اسٹورز استعفی نہیں دوں گا

بطور چیئرمین یوٹیلٹی اسٹورز استعفی نہیں دوں گا

اسلام آباد: چئیرمین بورڈ آف ڈائریکٹرز ذوالقرنین علی خان نے تسلیم کیا ہے کہ یوٹیلٹی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے