پاور سیکٹر کمپنیز ہمارے 80 ارب روپے دوابھی کےابھی۔ پی ایس او

پی ایس او نے پاور سیکٹر کمپنیز سے 80 ارب روپے کے بقایا جات مانگ لیے

اسلام آباد. پاکستان سٹیٹ آئل کمپنی نے تیل کی خریداری کیلئے بجلی فراہم کرنے والی کمپنیوں سے 80 ارب روپے مانگ لیے۔
پاور سیکٹر کے ذمہ پی ایس او کے 200 ارب روپے ہوگئے ہیں جن کی ادائیگی میں کوئی دلچسپی نہیں لی جارہی جس کی وجہ سے پی ایس او کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ بدھ کے روز پی ایس او نے پاور سیکٹر کمپنیز کو ہدایت جاری کی ہے کہ 80 ارب روپے کے بقایا جات فوری طور پر ادا کیے جائیں کیونکہ پاور سیکٹر کی طرف سے ادائیگی نہ ہونے کی وجہ سے تیل کی خریداری میں شدید مسائل کا سامنا ہے۔ پی ایس او نے ہدایت کی ہے کہ اگر بقایا جات ادا نہ کیے گئے تو پاور سیکٹر کمپنیز کو تیل کی فراہمی معطل کردی جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان میں سولر پینلزمینوفیکچرنگ، بیٹری پرچلنے والی بسوں کا یونٹ لگانے پر اتفاق کیا گیا

پاکستان میں سولر پینلزمینوفیکچرنگ، بیٹری پرچلنے والی بسوں کا یونٹ لگانے پر اتفاق کیا گیا

اسلام آباد: فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ سولر پینلز انرجی میں پاکستان کا مستقبل …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے