بچوں کی عزت نفس مجروح نہ کی جائے اور والدین کو وصول کردہ اضافی فیس سات دنوں میں واپس کی جائے گی

بچوں کی عزت نفس مجروح نہ کی جائے اور والدین کو وصول کردہ اضافی فیس سات دنوں میں واپس کی جائے گی

لاہور: ہائی کورٹ نے نجی اسکولوں کی جانب سے اضافی فیسوں کی وصولی کیخلاف درخواست پرعبوری فیصلہ جاری کردیا، جسٹس ساجدمحمودسیٹھی نےدرخواست پرعبوری فیصلہ جاری کیا

حکم نامے عدالت نے اضافی فیس نہ دینے والے طلبا کو اسکولوں سے نکالنے سے روک دیا اور کہا اضافی فیس کی عدم ادائیگی پربچوں کی عزت نفس مجروح نہ کی جائے۔
جسٹس ساجدمحمودسیٹھی نےفیصلے میں مزید کہا ہے کہ سپریم کورٹ کے احکامات کی روشنی میں ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کےمطابق فیسیں وصول کی جائیں گی اور ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی فیسوں سےمتعلق جامع رپورٹ پیش کرے گی۔
حکم نامے میں کہا گیا والدین کو وصول کردہ اضافی فیس سات دن میں واپس کرنا ہوگی، بعد ازاں درخواستوں پر مزید سماعت گیارہ دسمبر کو ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں

ہم مولانا فضل الرحمان کی گزشتہ پارلیمان کی تقریروں کی روشنی میں آگے بڑھ رہے ہیں

ہم مولانا فضل الرحمان کی گزشتہ پارلیمان کی تقریروں کی روشنی میں آگے بڑھ رہے ہیں

سیالکوٹ: پارلیمان اس وقت تک جعلی نہیں ہو سکتی جب تک مولانا فضل الرحمان کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے