بلاول بھٹوزرداری کے محافظ نے صحافی کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

لاڑکانہ: چئیرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری کی حفاظت پر مامور سیکیورٹی گارڈ نے صحافی کو قافلے کے راستے میں آنے پر تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

وی آئی پی کلچر کے خاتمے کے دعویدار حکمرانوں کے پروٹوکول کے باعث جہاں آئے روز عوام کو ذلت وخواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے وہیں ان کے اس شاہانہ پروٹوکول کے باعث کہیں سڑک پر پھنسی ایمبولینس میں مریض جان کی بازی ہار جاتا ہے تو کہیں اسپتال کے باہر مریض تڑپ تڑپ کر جان دے دیتا ہے لیکن ان شہنشاہ اعظموں کے کان پر جوں تک نہیں رینگتی اورسونے پہ سہاگہ ان کے محافظوں کے نزدیک تو عوام کی  کوئی وقعت ہی نہیں ہوتی اوریہ حضرات بعض اوقات شہریوں کو تشدد کا نشانہ بنانے سے بھی گریز نہیں کرتے اور اب ان محافظوں کے تشدد سے صحافی بھی محفوظ نہیں رہے۔

لاڑکانہ میں چیرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کے پروٹول قافلے کی کوریج کرنے والے صحافی عامر لاڑک کو سیکیورٹی گارڈ نے لاتوں اور گھونسوں سے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

یہ بھی پڑھیں

30 ستمبر کو سندھ کے 5 تعلیمی بورڈز میں چیئرمینز کے عہدے کی مدت پوری ہو رہی ہے

30 ستمبر کو سندھ کے 5 تعلیمی بورڈز میں چیئرمینز کے عہدے کی مدت پوری ہو رہی ہے

کراچی: چیف سیکریٹری سندھ ممتاز علی شاہ نے ایکسپریس سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے