حکومت کی جانب سے 7 ارب روپے کے ضمانتی بانڈز جمع کروانے کی شرط مسترد کی

حکومت کی جانب سے 7 ارب روپے کے ضمانتی بانڈز جمع کروانے کی شرط مسترد کی

اسلام آباد: سینیٹ کے چیئرمین صادق سنجرانی نے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے قائد اور سابق وزیراعظم نواز شریف کو علاج کے لیے فوری طور پر بیرون ملک بھیجا جائے

سینیٹ اجلاس کے میں پوائنٹ آف آرڈر پر سینیٹر جاوید عباسی نے نواز شریف کو بیرون ملک جانے کے لیے حکومت کی جانب سے 7 ارب روپے کے ضمانتی بانڈز جمع کروانے کی شرط مسترد کی۔چیئرمین سینیٹ نے قائد ایوان شبلی فراز اور وزیر برائے پارلیمان امور اعظم سواتی کے ذریعے حکومت کو نواز شریف کی صحت سے متعلق فراہم کردہ تمام طبی سہولیات کی فراہمی سے متعلق آگاہ کیا۔
چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے دونوں فریقین سے کہا کہ وہ نواز شریف کی صحت کے معاملے پر سیاست کرنے گریز کریں۔
جاوید عباسی نے خبردار کیا کہ سیاست میں موجود منفی روایات ملک کے لیے خطرناک ہوسکتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

فل کورٹ اجلاس میں سپریم کورٹ کے تمام ججزشرکت کریں گے

فل کورٹ اجلاس میں سپریم کورٹ کے تمام ججزشرکت کریں گے

اسلام آباد: چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کے اعزاز میں فل کورٹ ریفرنس 20 دسمبرکوکورٹ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے