نارتھ ناظم آباد میں نجی سکول پر پٹاخے پھینکنے والے بچوں نے شرارت کی تھی جنہیں بیان لینے کے بعد رہا کر دیا گیا:ڈی آئی جی ویسٹ

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)ڈی آئی جی ویسٹ فیروز شاہ نے کہاہے کہ نارتھ ناظم آباد میں نجی سکول پر پٹاخے پھینکنے والے بچوں نے شرارت کی تھی جنہیں بیان لینے کے بعد رہا کر دیا گیاہے ۔
تفصیلات کے مطابق فیروز شاہ کا کہناتھا کہ طلبہ نے شرارت کی تھی جس کے باعث انہیں تنبیہ کے بعد چھوڑ دیا گیاہے ،بچوں کا مستقبل تباہ نہیں کرنا چاہتے ہیں ،اتنی سزا ہی کافی ہے ۔
واضح رہے کہ پولیس نے نارتھ ناظم آبادمیں سکول پر دستی بم پھینکنے والے پانچ طالب علموں کو حراست میں لیاتھا ۔اپنے بیان میں بچوں کا کہناتھا کہ سکول میں کسی سے کوئی دشمنی نہیں ہے ،میں نے مذاق میں بم پھینکا تھا ۔بچے کے والدین کا کہناتھا کہ وہ اپنے بیٹے کی حرکت پر انتہائی شرمند ہ ہیں جبکہ بم ہاتھ میں پھٹنے کی وجہ سے طالب علم کی تین انگلیاں بھی زخمی ہو ئی ہیں ۔سکول انتظامیہ نے پانچوں طالب علموں کو ایسی حرکت کرنے پر سکول سے فارغ کر دیاہے ۔

یہ بھی پڑھیں

وفاقی حکومت کا اقدام صوبائی خود مختاری پر حملے کے مترادف ہے

وفاقی حکومت کا اقدام صوبائی خود مختاری پر حملے کے مترادف ہے

کراچی: بلاول بھٹو نے کہا کہ وفاقی حکومت عوامی ردعمل سے پہلے اسپتالوں پر اپنا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے