جرمنی میں یہودی عبادت گاہ کے قریب فائرنگ، 2 افراد ہلاک

جرمنی میں یہودی عبادت گاہ کے قریب فائرنگ، 2 افراد ہلاک

جرمنی کے شہر ہالے میں یہودیوں کی عبادت گاہ کے قریب فائرنگ کے نتیجے میں 2 افراد ہلاک ہوگئے۔

مقامی پولیس کے مطابق مشین گنز سے لیس حملہ آوروں نے یہودی عبادت گاہ اور کباب ہاؤس کو نشانہ بنایا اور یہودی عبادت خانے کے باہر اندھا دھند فائرنگ کی۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ فائرنگ کے واقعے میں 2 افراد ہلاک ہوئے جن میں سے ایک ہلاکت یہودی عبادت گاہ کے قریب اور دوسری کباب ہاؤس کے باہر ہوئی جبکہ واقعے میں کئی افراد زخمی ہوئے ہیں۔

یہودی کمیونٹی کے سربراہ نے بتایا کہ حملہ آور نے فوجی لباس پہن رکھا تھا اور عبادت گاہ میں ’یوم کپور‘ کے مذہبی تہوار کے موقع پر 70 سے 80 افراد موجود تھے۔

مقامی پولیس کے مطابق ایک مشتبہ شخص کو حراست میں لیا گیا ہے جبکہ  مزید حملہ آوروں کی تلاش جاری ہے۔

 پولیس نے علاقے کے لوگوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایت کی ہے جبکہ شہر کا مرکزی ٹرین اسٹیشن بھی بند کر دیا گیا ہے۔

دوسری جانب سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو گردش کررہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ فوجی لباس پہنا ایک شخص گاڑی سے اتر کر مسلسل فائرنگ کررہا ہے۔

جوہری ہتھیاروں کی تیاری اور استعمال اسلام میں منع ہے، خامنہ ای

یہ بھی پڑھیں

مائیں اپنی پسند کا لباس پہن سکتی ہیں

مائیں اپنی پسند کا لباس پہن سکتی ہیں

فرانس:سیاستدان کے رویے کی وجہ سے مسلم خاتون کے ساتھ بیٹھا ان کا بچہ بھی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے