البرغوثی کی شہریت منسوخ کرنے کی مہم کو اور مطالبے کو جمہوریت کی نفی

البرغوثی کی شہریت منسوخ کرنے کی مہم کو اور مطالبے کو جمہوریت کی نفی

یروشلم: عبرانی اخبار کے مطابق حالیہ برسوں میں قابض حکومت نے عمر برغوثی کے خلاف مہم شروع کی کیونکہ برغوثی نے عالمی سطح پر اسرائیلی ریاست کے بائیکاٹ کی موثر مہم برپا کررکھی ہے۔2017 البرغوثی کو عکا شہر میں گرفتار کیا گیا تھا

اس وقت لیکوڈ پارٹی کی کنیسٹ ممبر کیٹی شیٹریٹ نے جج دینا زلبر اور وزیر داخلہ آریہ ڈری سے ان کے ملک بدری کا مطالبہ کیا تھا۔
ڈیری نے کہا کہ وہ اسرائیل میں برغوثی کی شہریت منسوخ کرنے اور اسرائیلی شہریت سے استفادہ کرنے سے مکمل طورپر محروم کرنے پرکام کررہے ہیں۔
اسرائیلی کنیسٹ میں عرب اتحاد کے سربراہ ایمن عودہ عمر البرغوثی کی شہریت منسوخ کرنے کی مہم کو اور مطالبے کو جمہوریت کی نفی اور نسل پرستانہ طرز عمل قرار دیا۔
انہوں نے کہا کہ آج برغوثی کی شہریت منسوخ کی تو یہ ایک مثال بن جائے گی اور کل کو ہر اس شخص کی شہریت خطرے میں ہوگی جو اسرائیل کے ساتھ متفق نہیں۔
ایمن عودہ کا کہنا تھا کہ ہم اسرائیلی حکومت کی طرف سے ایمن عودہ کے خلاف نفرت آمیز مہم روکنے کے لیے پوری کوشش کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں

مائیں اپنی پسند کا لباس پہن سکتی ہیں

مائیں اپنی پسند کا لباس پہن سکتی ہیں

فرانس:سیاستدان کے رویے کی وجہ سے مسلم خاتون کے ساتھ بیٹھا ان کا بچہ بھی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے