اگر ایران پر حملہ ہوا، تو پھر کھلی جنگ ہو گی: جواد ظریف

اگر ایران پر حملہ ہوا، تو پھر کھلی جنگ ہو گی: جواد ظریف

تہران: ایران نے خبردار کیا ہے کہ اگر امریکا یا اس کے اتحادیوں نے اس پر حملہ کیا، تو ایک بھرپور جنگ شروع ہوجائے گی.

تفصیلات کے مطابق ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے فوجی حملے کی صورت میں مخالفین کو شدید نتائج کی دھمکی دی ہے.

جواد ظریف نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ اگر ہمارے خلاف کوئی عسکری کارروائی کی گئی، تو  ردعمل میں ایک بھرپور اور کھلی جنگ ہوگی، ہم اپنے علاقے کے دفاع میں کسی قسم کی غفلت نہیں کریں گے، کوئی غلط فہمی میں نہ رہے.

جواد ظریف نے مزید کہا کہ میں ایک سنجیدہ بیان دے رہا ہوں، ہم جنگ نہیں چاہتے، عسکری تنازعے سے دور رہنا چاہتے ہیں، مگر اپنے علاقے کا ہر صورت دفاع کریں گے، امریکا کے  ایران پر الزامات امریکی صدر کو  جنگ میں جھونکنے کی کوشش ہیں۔

خیال رہے کہ سعودی عرب کی تیل تنصیبات پر حالیہ ڈرون حملوں کے بعد ایران اور سعودی عرب کے درمیان شدید تناؤ پایا جاتا ہے.

ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے اس ضمن میں سخت ردعمل سامنے آیا تھا. امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو بھی سعودی تیل تنصیبات پر حملے کو جنگی اقدام ٹھہرا چکے ہیں.

امریکا نے افغانستان کی امداد میں کمی اعلان کا کر دیا

یہ بھی پڑھیں

سمندری طوفان ہیگی جاپان کے ساحل سے ٹکرا گیا، ایک شخص ہلاک، متعدد لاپتا

سمندری طوفان ہیگی جاپان کے ساحل سے ٹکرا گیا، ایک شخص ہلاک، متعدد لاپتا

ٹوکیو: سمندری طوفان ہیگی نے جاپان میں تباہی مچادی جس کے نتیجے میں کئی شہروں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے