غیر ضروری اقدام سے اربوں ڈالرکے منصوبوں پر عملدرآمد میں الجھاؤ پیدا ہو گا

غیر ضروری اقدام سے اربوں ڈالرکے منصوبوں پر عملدرآمد میں الجھاؤ پیدا ہو گا

اسلام آباد: پارلیمانی کمیٹی نے سی پیک اتھارٹی کے قیام کی حکومتی تجویزکی مخالف کرتے ہوئے قراردیا ہے کہ اس غیر ضروری اقدام سے اربوں ڈالرکے منصوبوں پر عملدرآمد میں الجھاؤ پیدا ہو گا

صدارتی آرڈی ننس کے ذریعے اتھارٹی کے قیام کے حکومتی فیصلے پرتنقیدکی کہ گیس انفراسٹرڈیولپمنٹ سیس آرڈیننس پر سبکی کے بعدحکومت کی اخلاقی ساکھ کومزیدنقصان ہو گا۔
جمعرات کے روز دونوں ایوانوں کی 22رکنی مشترکہ پارلیمانی کمیٹی کا ان کیمرہ اجلاس پی ٹی آئی کے شیرعلی ارباب کی زیر صدارت ہوا،جوسی پیک اتھارٹی پرٹی اوآرزبنانے کیلئے بلایا گیا تھا تاہم اجلاس میں شریک ارکان کی اکثریت نے ہاتھ اٹھاکراس تجویزکومستردکردیا۔
وفاقی کابینہ نے سی پیک اتھارٹی کے قیام کیلئے اس ہفتے صدارتی آرڈیننس کی منظوری دی تھی۔

یہ بھی پڑھیں

آئی ایم ایف کا یہ وفد پاکستان کے دورےمیں اہم ملاقاتیں کرےگا

آئی ایم ایف کا یہ وفد پاکستان کے دورےمیں اہم ملاقاتیں کرےگا

اسلام آباد: آئی ایم ایف کا یہ ایس او ایس مشن ہے ، جو کہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے