غیرحاضری کی وضاحت کا مکمل موقع دیا جائے گا،8ہزاراساتذہ ایسے ہیں جو اسکول ہی نہیں آتے

غیرحاضری کی وضاحت کا مکمل موقع دیا جائے گا،8ہزاراساتذہ ایسے ہیں جو اسکول ہی نہیں آتے

کراچی: اساتذہ کیخلاف سخت کارروائی کا فیصلہ کرلیا،سندھ بھر میں غیر حاضر 18 ہزار اساتذہ کو شوکاز نوٹس دینے کا فیصلہ کرلیا گیا

مانیٹرنگ اینڈ ای ویلیو ایشن رپورٹ مرتب کی گئی جو سال بھر کی محنت ہے جس کے بعد یہ بات سامنے آئی کہ صوبہ سندھ میں 18 ہزار اساتذہ ایسے ہیں جو اسکول آتے ہی نہیں ہیں اور کئی اساتذہ مسلسل غیر حاضر رہتے ہیں۔
تمام ضلعی تعلیمی افسران اور ڈائریکٹرز اسکولزکو اعتماد میں لے کر فیصلہ کیا گیا ہے کہ ایفیشنسی اور ڈسپلین رولز1973 کے تحت غیر حاضر اور مفرور اساتذہ کے خلاف کارروائی اور تمام فیصلے قانون کی روح کے مطابق ہوں اس وقت 18 ہزار غیر حاضر اساتذہ کی نشاندہی ہوچکی ہے اور ان اساتذہ کو شوکاز نوٹس جاری کیے جارہے ہیں۔
ہر استاد سے ذاتی حیثیت میں جواب طلب کیا جائے گا اور اگر کسی بھی استاد کے پاس ایسی وضاحت اور عذر موجود ہے جو قابل قبول ہو تو وہ پیش کریں لیکن اگر کسی استاد کے پاس غیرحاضری کے حوالے وضاحت موجود نہیں تو قانون کے تحت اور بچوں کے بہتر مفاد میں ایسے اساتذہ کو سزا ضرور دی جائے گی۔
سیکریٹری اسکول ایجوکیشن نے مزید کہا کہ اگر کوئی استاد کہتا ہے کہ میرا تبادلہ ہوگیا تھا اور آنا ممکن نہیں تو اس کا فیصلہ اعلی اتھارٹی کرے گی کہ اس طرح کے کیسز میں کون سی اور کس حد تک سزا ہوسکتی ہے فی الحال قانون کے تمام تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے 18 ہزار غیر حاضر اساتذہ کو حتمی شوکاز نوٹس دیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں

سندھ بھر میں کتوں کی بھرمار کے باعث شہریوں کی زندگی کو خطرہ لاحق

سندھ بھر میں کتوں کی بھرمار کے باعث شہریوں کی زندگی کو خطرہ لاحق

کراچی: حکومت سندھ ، محکمہ صحت اور بلدیہ عظمی شہریوں کو بہتر علاج کی سہولیات …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے