امریکہ کی میزائل سرگرمیوں پر روس کی نظر

امریکہ کی میزائل سرگرمیوں پر روس کی نظر

روس کے دفتر خارجہ کی ترجمان نے اعلان کیا ہے کہ روسی صدر پوتن کی ہدایات پر دور اور کم دوری پر مار کرنے والے امریکی میزائلوں کی تعیناتی و پیداواری سرگرمیوں پر ماسکو گہری نظر رکھے ہوئے ہے۔

ماریا زاخارووا نے تاکید کے ساتھ کہا ہے کہ امریکہ نے اگر اپنے میزائل پروگرام کو آگے بڑھایا تو روس بھی اپنی سلامتی کے پیش نظر جوابی قدم اٹھانے پر مجبور ہو جائے گا۔

امریکی وزارت جنگ نے آئی این ایف معاہدے سے علیحدگی کے بعد اعلان کیا ہے کہ واشنگٹن نئے میزائل تیار کرے گا۔

امریکی وزیر خارجہ نے دو اگست کو آئی این ایف معاہدے سے امریکہ کی باضابطہ طور پر علیحدگی کا اعلان کیا ہے۔ جبکہ روس نے امریکہ کے اس اقدام کو ایک بڑی غلطی سے تعبیر کیا ہے۔

ایران کے وزیر حارجہ محمد جواد ظریف نے امریکہ سے کہا ہے کہ بین الاقوامی معاہدوں سے علیحدگی اور اقتصادی دہشت گردی کے بجائے وہ دنیا میں پائے جانے والے نئے حقائق کو سمجھ کو ان کے ہم آہنگ ہونے کی کوشش کرے۔

پی آئی اے کپتانوں کی جدید خطوط پر تربیت کیلئے ایئربس 320 کا فلائٹ سیمیولیٹر لینے کا فیصلہ

یہ بھی پڑھیں

برطانیہ میں پندرہ جون سے دکانیں کھل جائیں گی

لندن: برطانوی حکومت نے ملک میں لاک ڈاؤن ختم کرنے کا اعلان کردیا وزیراعظم بورس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے