آئی این ایف سے امریکا کی علیحدگی سے دنیا میں خلفشار پیدا ہوگا

آئی این ایف سے امریکا کی علیحدگی سے دنیا میں خلفشار پیدا ہوگا

سابق سویت یونین کے آخری رہنما میخائل گورباچف نے آئی این ایف معاہدے سے امریکا کی علیحدگی پر تنقید کی اور کہا ہے کہ واشنگٹن کے اس اقدام سے ہتھیاروں کی نئی دوڑ کا آغاز اور دنیا میں بدامنی کا دور شروع ہوجائے گا۔

میخائل گورباچف نے روسی نیوز ایجنسی انٹرفیکس سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آئی این ایف کے بارے میں واشنگٹن نے جو سخت موقف اپنایا ہے اس سے امریکا ایک المئے سے قریب ہوتا جا رہا ہے۔ سابق سویت یونین کے آخری رہنما گورباچف نے جنھوں نے آئی این ایف معاہدے پر دستخط کئے تھے کہا کہ آئی این ایف کا خاتمہ عالمی برادری کے حق میں نہیں ہوگا۔ واضح رہے کہ امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیئو نے جمعے کو آئی این ایف کے خاتمے کا باضابطہ طور پر اعلان کردیا تھا۔ روسی وزارت خارجہ نے امریکا کے اس اقدام کو ایک بڑی غلطی قراردیا – ایران کے وزیرخارجہ ڈاکٹر محمد جواد ظریف نے بھی امریکا سے کہا ہے کہ وہ اقتصادی دہشت گردی کا ارتکاب اور بین الاقوامی معاہدوں سے نکلنے کے بجائے دنیا کے نئے حقا‍ ئق کا ادارک کرے۔ ٹرمپ انتظامیہ اب تک متعدد دوطرفہ ، چندجانبہ اور عالمی معاہدوں سے باہر نکل چکی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

چینی عدالت نے پاکستانی طالبعلم کو قتل کرنے والے شہری کو سزائے موت سنادی

چینی عدالت نے پاکستانی طالبعلم کو قتل کرنے والے شہری کو سزائے موت سنادی

بیجنگ: عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ کہ کونگ کو ایک بالغ شخص ہیں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے