مسئلہ کشمیر پر بھارت نے ڈونلڈ ٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش ایک بار پھر مسترد کردی

مسئلہ کشمیر پر بھارت نے ڈونلڈ ٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش ایک بار پھر مسترد کردی

نئی دہلی:

مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے بھارت نے ایک بار پھر ڈونلڈ ٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش کو مسترد کردیا ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے آج ایک بار پھر پاکستان اور بھارت کے درمیان مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کرتے ہوئے کہا کہ وہ مسئلہ کشمیر کے معاملے پر اپنی ثالثی کی پیشکش پر قائم ہوں تاہم بھارتی وزیراعظم نریندر مودی پر منحصر ہے کہ وہ پیشکش کو قبول کرتے ہیں یا نہیں۔

ڈونلڈ ٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش کے جواب میں بھارت نے ایک بار پھر روایتی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے مسئلہ کشمیر پر امریکی صدر کی پیشکش کو مسترد کردیا۔

بھارتی وزیر خارجہ جے شنکر نے سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر ٹوئٹ میں کہا کہ آسیان اجلاس کے دوران امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے ملاقات ہوئی جس میں انہیں دو ٹوک الفاظ میں آگاہ کر دیا ہے کہ اگر کشمیر پر کسی قسم کے مذاکرات ہوئے تو وہ پاکستان کے ساتھ بغیر کسی ثالث کے ہوں گے۔

سیکورٹی فورس کی فائرنگ میں چار سوڈانی مظاہرین ہلاک

یہ بھی پڑھیں

برطانیہ میں پندرہ جون سے دکانیں کھل جائیں گی

لندن: برطانوی حکومت نے ملک میں لاک ڈاؤن ختم کرنے کا اعلان کردیا وزیراعظم بورس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے