یورپی ممالک نے گیارہ وعدے دیے تھے اور ان میں سے ایک بھی پورا نہیں کیا

یورپی ممالک نے گیارہ وعدے دیے تھے اور ان میں سے ایک بھی پورا نہیں کیا

تہران: غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اسی تناظر میں ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای کا کہنا تھا کہ ایران بتدریج ڈیل کی تمام ذمے داریوں سے دست بردار ہوجائے گا

معاہدے میں شامل تمام یورپی ممالک کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا، خامنہ ای کے مطابق ڈیل میں شامل دیگر ممالک بھی معاہدے پر پورا نہیں اتر رہے۔
یورپی ممالک نے گیارہ وعدے دیے تھے اور ان میں سے ایک بھی پورا نہیں کیا گیا، اب ان پارٹنر ممالک نے اپنی کمٹ منٹس یا ذمہ داریوں میں بھی کمی لانا شروع کر دی ہے۔
ایران حکام یہ باور کراچکے ہیں کہ اگر یورپی ممالک بھی معاہدے کی پاسداری کریں تو ایران بھی اپنی ذمہ داریاں نبھانے کے لیے تیار کھڑا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

ایران اور یورپ کے درمیان مذاکرات کا اب تک کوئی نتیجہ برآمد نہیں ہوا ہے، ترجمان وزارت خارجہ

ترجمان وزارت خارجہ نے ایٹمی معاہدے کے بارے میں یورپی ملکوں کے ساتھ اسلامی جمہوریہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے