وطن واپسی پر کھلاڑیوں کا شاندار استقبال ہونا چاہئے

ویلنگٹن: نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کو مسلسل دوسری مرتبہ ورلڈکپ کے فائنل میں شکست کا سامنا کرنا پڑا لیکن رواں ورلڈکپ کے فائنل میں ہونے والی شکست زیادہ تکلیف دہ ہے

نیوزی لینڈ کی وزیراعظم نے کہا کہ دیگر کیوی مداحوں کی طرح میں اب بھی میچ کے نتیجے سے صدمے میں ہوں۔

وزیراعظم جسینڈرا آرڈرن نے تسلیم کیا کہ وہ فائنل میچ کے نتیجے سے صدمے میں ہیں اور کیوی مداحوں کا بھی یہی حال ہے، لہٰذا تصور کریں کہ کھلاڑیوں کا کیا حال ہو گا وہ تو اندر سے ٹوٹ چکے ہوں گے کہ اتنے قریب پہنچ کر وہ دوسری مرتبہ ٹرافی سے محروم رہ گئے۔

انہوں نے کہا کہ دیگر کیوی مداحوں کی طرح میں اب بھی میچ کے نتیجے سے صدمے میں ہوں۔ یہ ایک شاندار میچ تھا اور مجھے یاد نہیں پڑتا کہ میں نے کبھی ایسا میچ دیکھا ہو، اس میچ کو تاریخ میں صرف اور صرف شاندار کھیل کی بنیاد پر یاد رکھا جائے گا اور نتیجے کے برعکس میں یہ محسوس کرتی ہوں کہ ہمیں اپنے کھلاڑیوں پر فخر ہے کیونکہ انہوں نے پورے ٹورنامنٹ میں بہت ہی عمدہ کرکٹ کھیلی اور فائنل میں بھی ایسا ہی تھا۔

لیکن نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں نے اپنی 100 فیصد کارکردگی دکھائی اور وہ ملک و قوم کے ہیرو ہیں اس لئے وطن واپسی پر ان کا شاندار اور ناقابل فراموش استقبال ہونا چاہئے

یہ بھی پڑھیں

آسٹریلیا میں‌ موجود فاسٹ بولرنسیم شاہ والدہ کے جنازے میں‌ شرکت نہ کرسکے

آسٹریلیا میں‌ موجود فاسٹ بولرنسیم شاہ والدہ کے جنازے میں‌ شرکت نہ کرسکے

لاہور: قومی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ بولر نسیم شاہ کی والدہ گزشتہ رات انتقال کرگئیں۔ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے