لاہور سے 3 کالعدم تنظیموں کے 9 دہشتگرد گرفتار

پنجاب پولیس کے محکمہ انسداد دہشت گردی (سی ٹی ڈی) نے مختلف کارروائیاں کرتے ہوئے کالعدم تنظمیوں سپاہ صحابہ پاکستان (ایس ایس پی)، سپاہ محمد پاکستان اور داعش سے تعلق رکھنے والے 9 دہشت گردوں کو گرفتار کرلیا.

سی ٹی ڈی ترجمان کا کہنا تھا کہ پہلی کارروائی میں قاری محمد یوسف اور قاری محمد یونس کو ٹاؤن شپ کے سیکٹر اے ٹو میں قائم مدرسہ نور الہدیٰ سے گرفتار کیا گیا، جن کا تعلق داعش سے ہے۔

انھوں نے کہا کہ پولیس نے ان کے قبضے سے دھماکہ خیز مواد اور نفرت انگیز مواد برآمد کرکے ان پر انسداد دہشت گردی ایکٹ (اے ٹی اے) کی دفعہ 4/5 ای ایس اے، 11 ایف ٹو اور سیون کے تحت مقدمہ درج کیا ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ پولیس نے باٹاپور کے علاقے میں دوسری کارروائی کرتے ہوئے محمد سلیمان، احمد نواز، عبدالمنان اور حکیم خان کو گرفتار کیا ہے،جن کا تعلق ایس ایس پی سے بتایا گیا ہے۔

ترجمان نے کہا کہ پولیس نے ان ملزمان کے قبضے سے نفرت انگیز لٹریچر اور دھماکہ خیز مواد برآمد کیا ہے، جو گرین بیلٹ عبداللہ انٹرچینج کے قریب چھپایا گیا تھا۔

ان ملزمان کے خلاف اے ٹی اے کی دفعہ 11 ایف ٹو اور 9 کے تحت مقدمہ درج کیا گیا۔

سی ٹی ڈی ترجمان نے بتایا کہ پولیس کی جانب سے تیسری کارروائی ساندا کے علاقے میں کی گئی جہاں سے کالعدم سپاہ محمد پاکستان کے 3 اراکین شہزادہ غلام حسین، شاہد اور ساجد عباس کو گرفتار کیا گیا۔

انھوں نے کہا کہ پولیس نے بی بی پاک دامن مزار کے قریب قائم عمران کیسٹ اینڈ سی ڈی ہاؤس سے نفرت انگیز مواد قبضے میں لے کر ملزمان کے خلاف انسداد دہشت گردی کی دفعہ 11 ایف ٹو اور 9 کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے۔

ترجمان کے مطابق گرفتار کیے جانے والے ملزمان قانون نافذ کرنے والے اداروں پر حملے کی منصوبہ بندی کررہے تھے۔

تمام گرفتار کیے جانے والے ملزمان کو مزید تفتیش کے لیے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

مسیحی قبرستان, میں قبروں, پر نصب صلیب توڑے گئےہیں

مسیحی قبرستان میں قبروں پر نصب صلیب توڑے گئےہیں

اوکاڑہ: سینٹ اینتھونی چرچ کے پادری فادر جیمز نے بتایا کہ ’اس قبرستان میں 20 …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے