گرین لائن ترقیاتی کام کے باعث شہریوں کو مشکلات کا سامنا

گرین لائن ترقیاتی کام کے باعث شہریوں کو مشکلات کا سامنا

کراچی: اگرچہ سابق وزیراعظم نواز شریف نے منصوبہ کو 2 سال میں مکمل کرنے کا اشارہ دیا تھا، مگر اب تک اس پر کام جاری ہے

25 ارب روپے کی لاگت کے منصوبے کو ابتدا میں سرجانی ٹاون سے گرومندر تک رکھا گیا تھا، تاہم بعد میں اسے کے ایم سی بلڈنگ تک بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا۔
سابق وزیراعظم نواز شریف نے شہرِ قائد میں پبلک ٹرانسپورٹ کے مسائل حل کے لیے فروری 2016 گرین لائن بس ریپڈ ٹرانزٹ سسٹم کا سنگ بنیاد رکھا تھا۔
اس منصوبے کے بارے میں کہا گیا تھا کہ یہ لاہور اور اسلام آباد کی میٹرو بس سروس سے بھی زیادہ خوبصورت منصوبہ ہوگا۔
لیکن کراچی کے شہری اب تک اس سے فائدہ نہیں اٹھا سکے اور شاید انہیں اس کے مکمل ہونے کیلئے ابھی مزید انتظار کرنا پڑے.

یہ بھی پڑھیں

لیبارٹریوں کے معیار کو جانچنے کیلیے 11 رکنی ٹاسک فورس تشکیل

لیبارٹریوں کے معیار کو جانچنے کیلیے 11 رکنی ٹاسک فورس تشکیل

کراچی: سندھ ہیلتھ کیئر کمیشن نے سندھ بھر میں قائم لیبارٹریوں کے معیار کو جانچنے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے