پہلا سیمی فائنل: بھارتی ٹیم کو فیورٹ قرار دیا جا رہا ہے

بھارت اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا سیمی فائنل مانچسٹر میں کھیلا جائے گا۔

بھارت اور نیوزی لینڈ کے درمیان راؤنڈ میچ بارش کی نذر ہو گیا تھا اور دونوں کو ایک دوسرے کی کمزوریاں یا خوبیاں جاننے کا موقع نہیں ملا تھا۔

بھارت نے اب تک ایونٹ میں سب سے بہترین کھیل پیش کیا اور شاندار کارکردگی کی بدولت پوائنٹس ٹیبل پر پہلے نمبر کی ٹیم کی حیثیت سے ایونٹ کے راؤنڈ مرحلے کا اختتام کیا۔

بھارت کو صرف انگلینڈ کے ہاتھوں شکست ہوئی اس کے علاوہ تمام ٹیموں کے خلاف کامیابی حاصل کی ۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم نے ایونٹ کا شاندار انداز میں آغاز کیا اور بہترین کھیل پیش کرتے ہوئے اپنے ابتدائی پانچ میچوں میں کامیابی حاصل کی۔

تاہم پاکستان کے ہاتھوں شکست کے بعد فتوحات کیویز سے روٹھ گئیں اور انہیں لگاتار تین میچوں میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا لیکن ابتدائی کامیابیوں اور بہترین رن ریٹ کی بدولت نیوزی لینڈ کی ٹیم اگلے راؤنڈ میں پہنچنے میں کامیابی رہی۔

اگر موجود فارم کی بات کی جائے تو بھارتی ٹیم اس وقت شاندار فارم میں ہے اور خصوصاً اوپنر روہت شرما اس وقت نیوزی لینڈ کے لیے سب سے بڑا خطرہ ہوں گے جو اب تک ایونٹ میں ریکارڈ پانچ سنچریاں اسکور کر چکے ہیں اور 647رنز بھی اسکور کر چکے ہیں۔

بھارتی ٹیم کے برعکس نیوزی لینڈ کی ٹیم گزشتہ تینوں میچ ہارنے اور بیٹنگ لائن کی ناکامی کے سبب شدید دباؤ کا شکار ہو گی۔

نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن نے میچ کے لیے اپنی ٹیم کو کمتر حریف ماننے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہر کسی کے لیے یہ ایک تازہ اور نیا آغاز ہو گا لہٰذا کسی بھی ٹیم کو سیمی فائنل میں برتری حاصل نہیں ہو گی۔

 

یہ بھی پڑھیں

سابق آسٹریلوی کپتان و کمنٹیٹر ای این چیپل کینسر میں مبتلا

سابق آسٹریلوی کپتان و کمنٹیٹر ای این چیپل کینسر میں مبتلا

سڈنی: آسٹریلوی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور معروف کمنٹیٹر ای این چیپل کینسر کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے