لیبیا میں قتل و غارت گری کا ذمہ دار نیٹو: روسی صدر

لیبیا میں قتل و غارت گری کا ذمہ دار نیٹو: روسی صدر

روس کے صدرنے لیبیا میں قتل و غارت گری اور امن و امان کی مخدوش حالت کا ذمہ دار نیٹو کو قرار دے دیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق روس کے صدر ولادیمیر پوتین نے اطالوی وزیراعظم کونتے سے ہونے والی ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس میں لیبیا کی صورت حال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ لیبیا میں صورت حال بد سے بد تر ہوتی جارہی ہے اور اس خوں ریزی کا ذمہ دار کوئی اور نہیں بلکہ نیٹو ہے۔

روسی صدر نے یورپی یونین کی جانب سے 23 جون 2020ء تک عائد کی گئی پابندیوں کے حوالے سے کہا ہے کہ وہ یورپی یونین کے ساتھ تعلقات میں بہتری کی امید رکھتے ہیں، یورپی یونین نے کریمیا اور سواس توپول کے غیر قانونی الحاق پر روس پر پابندیاں عائد کی تھی۔

اس موقع پر اٹلی کے وزیراعظم نے میڈیا کو بتایا کہ روسی صدر پوتین کے ساتھ ملاقات میں شام، وینزویلا اور یوکرین کے بحرانوں پر اولویت کی بنیاد پر بات چیت ہوئی، روسی صدر کی اٹلی آمد پر اُن کا شکر گزار ہوں۔

الحدیدہ میں حوثیوں کی طرف سے گھروں کو مورچوں میں تبدیل کردیا گیا

یہ بھی پڑھیں

برطانیہ میں پندرہ جون سے دکانیں کھل جائیں گی

لندن: برطانوی حکومت نے ملک میں لاک ڈاؤن ختم کرنے کا اعلان کردیا وزیراعظم بورس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے