داعش نے افغانستان میں 30یرغمال افراد کو قتل کردیا

افغانستان کے صوبے غور میں دولت اسلامیہ تنظیم کے دہشت گردوں نے 30یرغمال شہریوں کو گولیاں مارکر ہلاک کردیا۔

صوبہ غور کے ترجمان کا کہناہے کہ داعش نے ان شہریوں کو اس وقت یرغمال بنایا جب وہ پہاڑوں پرلکڑیاں جمع کررہے تھے۔

حکام نے بتایا کہ ان شہریوں کو داعش نے اس وقت گولیاں مار کر ہلاک کیا جب مقامی افراد نے ان کو بچانے کی کوشش کی۔صوبہ غور کے ترجمان نے بتایا کہ مقامی افراد کی فائرنگ سے دولت اسلامیہ کا مقامی کمانڈر بھی ہلاک ہوا ہے۔

صوبہ غور کے گورنر ناصر خازے کا کہناتھاکہ داعش کی جانب سے فائرنگ میں ہلاک ہونے والوں میں بچے اور خواتین بھی شامل ہیں۔

خیال رہے کہ جنوری 2015 سے افغانستان کے مختلف علاقوں میں طالبان اور داعش کے درمیان جھڑپیں بھی ہوئی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

امن و استحکام کے بغیر معاشی بہتری حاصل نہیں کی جاسکتی

امن و استحکام کے بغیر معاشی بہتری حاصل نہیں کی جاسکتی

ڈیووس: مجھے سمجھ نہیں آتا کہ ریاستیں مسائل کا حل جنگ میں کیوں ڈھونڈ رہی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے