عیدالفطر : کراچی پولیس کیجانب سے سیکیورٹی پلان کا جائزہ

عیدالفطر : کراچی پولیس کیجانب سے سیکیورٹی پلان کا جائزہ

کراچی: عیدالفطر کراچی سمیت سندھ میں 35ہزارپولیس اہلکارسیکورٹی فرائض انجام دینگے

آئی جی سندھ ڈاکٹر سید کلیم امام نے کہا ہے کہ تمام مرکزی مساجد،امام بارگاہوں اور عیدگاہوں سمیت دیگر کھلے مقامات کی نماز عید سے قبل سوئپنگ اور کلیئرنس کے عمل کو یقینی بنایا جائے

ٹریفک پولیس عید کے موقع پر ٹریفک کی بلاتعطل روانی کے حوالے سے اقدامات کرے،یہ ہدایات انہوں نے عیدالفطر کے حوالے سے کراچی پولیس کیجانب سے مرتب کردہ سیکیورٹی پلان کا جائزہ لیتے ہوئے جاری کیں،آئی جی سندھ نے کہا کہ عید کے تینوں دنوں میں ضلعی وائرلیس کنٹرول رومز پر متعلقہ ایس ایچ اوز نمازعید کے آغازتااختتام کی تفصیلات باقاعدہ نوٹ کرائیں گے جبکہ کڑی نگرانی،علاقوں میں ریکی کی بدولت جرائم کیخلاف تمام ترمجموعی امور کو بھی انتہائی مربوط اور موثر بنائیں گے

پولیس رپورٹ کے مطابق کراچی میں نماز عید کے حوالے سے1367عیدگاہوں،مساجد،کھلے مقامات،امام بارگاہوں پر کم و بیش15,000 پولیس افسران اور جوان سیکیورٹی فرائض انجام دینگے جبکہ موبائل اور موٹرسائیکل پر مامور افسران اور جوان اور اضافی نفری اسکے

مساجد،امام بارگاہوں،عیدگاہوںاوردیگرکھلے مقامات پر بھی اہلکاوں کو عید الفطر کنٹی جینسی پلان کے تحت ذمہ داریاں تفویض کی گئی ہیں،آئی جی سندھ نے پولیس کو ہدایات جاری کیں کہ متعلقہ علاقوں میں رینڈم ،اسنیپ چیکنگ،گشت اوردیگرضروری سیکیورٹی اقدامات سے قیام امن کی مجموعی صورتحال کو کنٹرول میں رکھنے کے تمام تر امور کو یقینی بنایا جائے اور باالخصوص ڈیوٹی پوائنٹس کو کسی بھی صورت خالی نہ چھوڑا جائے تاکہ عید کے تینوں دنوں میں سیکیورٹی کے مسلسل اقدامات کو فول پروف بنایا جاسکے

یہ بھی پڑھیں

ساحلی علاقے صوبائی حکومت کے زیر انتظام لانے کا فیصلہ

ساحلی علاقے صوبائی حکومت کے زیر انتظام لانے کا فیصلہ

کراچی: قانونی مسودے کی سندھ اسمبلی سے منظوری کے بعد کراچی کے تمام ساحل سندھ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے