اراکین رابطہ کمیٹی کوکسی قانونی جوازکے بغیر گرفتار کیا گیا

متحدہ قومی موومنٹ کے رہنما ندیم نصرت نے مطالبہ کیا ہے کہ پروفیسر حسن ظفر عارف اور کنور خالد یونس کو فی الفور رہا کیا جائے، ایم کیوایم کے رہنماوٴں اور کارکنوں کی گرفتاریوں کا سلسلہ بند کیا جائے۔
رہنما ایم کیو ایم ندیم نصرت نے لندن سے جاری کیے گئے بیان میں مزید کہا ہے کہ سندھ حکومت کے دورمیں جمہوری اور سیاسی آزادیوں کو سلب کیا جا رہا ہے،اراکین رابطہ کمیٹی کوکسی قانونی جوازکے بغیر گرفتار کیا گیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ اراکین رابطہ کمیٹی کو پریس کانفرنس تک نہ کرنے اور پرامن سیاسی سرگرمیوں کی اجازت نہیں دی جارہی ہے۔
ندیم نصرت کا یہ بھی کہنا ہے کہ کالعدم تنظیمیں کھلے عام اپنی سرگرمیاں جاری رکھے ہو ئے ہیں، پی ٹی آئی نے اسلام آباد بند کرنے کا اعلان کیا ہے، اس کی راہ میں کوئی رکاوٹ نہیں۔

یہ بھی پڑھیں

اقوام متحدہ کو کشمیریوں کو بچانے کیلئے آگے آنا ہوگا، شاہ محمود کا یواین سربراہ کو فون

اقوام متحدہ کو کشمیریوں کو بچانے کیلئے آگے آنا ہوگا، شاہ محمود کا یواین سربراہ کو فون

اسلام آباد: بھارت کے زیر قبضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال پر وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے