جہاں کوئی, بھی سرمایہ کاری, کرنے سے گبھراتا, ہے وہاں صدرالدین ہاشوانی نے, ایک بڑی سرمایہ, کاری کی

جہاں کوئی بھی سرمایہ کاری کرنے سے گبھراتا ہے وہاں صدرالدین ہاشوانی نے ایک بڑی سرمایہ کاری کی

بلوچستان: گوادر میں جب سرمایہ کاروں کو درپیش مسائل اور خاص طور پر قیام اور سیکورٹی کی بات ہوئی تھی تو اس وقت کے فوجی صدر پرویزمشرف نے صدرالدین ہاشوانی کو ہوٹل کی تعمیر کے لیے کہا جن سے میاں نواز شریف کے بعد ان کے خوشگوار تعلقات رہے

ہاشو گروپ کے سربراہ صدرالدین ہاشو کی تعریف کرتے ہوئے کہا تھا کہ جہاں کوئی بھی سرمایہ کاری کرنے سے گبھراتا ہے وہاں صدرالدین ہاشوانی نے ایک بڑی سرمایہ کاری کی ہے۔
گوادر شہر میں اسماعیلی کمیونٹی تجارت سے وابستہ رہی ہے۔ صدر الدین ہاشوانی کے نانا گوادر اور دادا کا تعلق لسبیلہ بلوچستان سے تھا۔ ان کے والد کراچی منتقل ہوگئے جہاں انھوں نے کھالوں کا کاروبار شروع کیا تھا۔
صدر الدین ہاشوانی چاول، اسٹیل سمیت مختلف کاروبار سے منسلک رہے جبکہ انھیں کامیابی اور شہرت ہوٹل کے کاروبار سے ملی۔ ان کے گوادر اور کراچی کے علاوہ اسلام آباد میں بھی ہوٹل ہیں۔ 2008 میں اسلام آباد میں ان کے ہوٹل میریٹ پر حملہ کیا گیا تھا۔
پی سی ہوٹل گوادر کوہ باطل پر واقع ہے۔ جہاں سے بحیرہ عرب کا دلکش نظارہ اور گوادر پورٹ واضح طور پر نظر آتا ہے۔ اس ہوٹل میں 114 گیسٹ روم اور چار سویٹس موجود ہیں۔ ہوٹل کے قیام کے وقت کہا گیا تھا کہ یہ ہوٹل ساڑھے تین سو لوگوں کو روزگار فراہم کرے گا۔
گوادر پورٹ کے افتتاح سے لے کر صدر، وزیر اعظم سمیت تمام وی آئی پیز کی آمد اسی ہوٹل میں ہوتی ہے، جبکہ بڑے سرمایہ کاروں کی پہلی ترجیح بھی یہ ہی ہوٹل ہوتا ہے، جو سنگھار سوسائٹی میں واقع ہے جہاں اہم سیاسی رہنماؤں کے پلاٹ مختص ہیں۔
ہوٹل میں داخل ہونے کے لیے ایک ہی سڑک واقع ہے جو چڑھائی سے ہوتے ہوئے ہوٹل تک پہنچتی ہے۔ اس سے قبل ایف سی سمیت دیگر اداروں کی نصف درجن کے قریب چیک پوسٹیں موجود ہیں۔
اس حملے کی ذمہ داری بلوچستان لبریشن آرمی نے قبول کی ہے۔ ترجمان کا کہنا ہے کہ اس حملے میں انھیں بلوچستان لبریشن فرنٹ اور بلوچ ریپبلکن آرمی بیبرگ گروپ کی حمایت حاصل تھی۔

یہ بھی پڑھیں

پلاسٹک کے شاپنگ, بیگز کی, خرید و فروخت, پر مکمل, طور پر پابندی

پلاسٹک کے شاپنگ بیگز کی خرید و فروخت پر مکمل طور پر پابندی

کوئٹہ: شہر کے مختلف علاقوں میں پلاسٹک کے 12 گودام سیل کردیے گئے ہیں پلاسٹک …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے