افغانستان میں معروف خاتون صحافی فائرنگ سے ہلاک

افغانستان میں معروف خاتون صحافی فائرنگ سے ہلاک

کابل: افغانستان میں مسلح افراد کی فائرنگ کے نتیجے میں افغان ٹیلی ویژن کی معروف خاتون صحافی مینہ مینگل ہلاک ہوگئیں۔

تفصیلات کے مطابق فائرنگ کا واقعہ افغان دارالحکومت کابل میں پیش آیا جہاں وہ سڑک پر کھڑی اپنی گاڑی کے آنے کا انتظار کررہی تھیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ انہوں نے طویل عرصے تک ملکی میڈیا کے لیے اپنی خدمات انجام دیں بعد ازاں انہوں نے پیشہ صحافت سے کنارہ کشی اختیار کرلی تھی، وہ بحیثیت اینکر بھی ٹی پی پر کام کرچکی ہیں۔

موٹر سائیکل سوار دو مسلح افراد نے مینہ مینگل پر اندھادھن فائرنگ شروع کردی جس کے باعث وہ موقع پر ہی ہلاک ہوگئیں، بعد ازاں انہیں اسپتال منتقل کیا گیا۔

مینہ مینگل افغانستان میں خواتین کے حقوق کے لیے آواز بلند کرتی تھیں، بالخصوص لڑکیوں کی تعلیم اور سماجی خدمات سے متعلق بھی آگاہی فراہم کرتی تھیں۔

وہ ایک نجی ٹیلی ویژن میں پریزنٹر کے طور پر ایک عشرے سے زائد عرصے تک وابستہ رہ چکی تھیں، جس کا طلوع پشتو زبان کی نجی ٹیلی ویژن چینل، ’لمر‘ اور نجی قومی ٹیلی ویژن براڈکاسٹر، ’شمشاد ٹی وی‘ سے تعلق ہے۔

غیر ملکی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ اس حملے میں طالبان ملوث ہوسکتے ہیں، اس سے قبل بھی ایسے واقعے کے پیچھے ہمیشہ افغان طالبان رہے ہیں، البتہ طالبان رہنماؤں کی جانب سے ذمہ داری قبول نہیں کی گئی۔

میکسیکو میں اجتماعی قبر سے 35 لاشیں برآمد

یہ بھی پڑھیں

ریاست جارجیا کے حراستی مراکز میں قید خواتین کے ’رحم مادر‘ نکالے جانے کا اسکینڈل

ریاست جارجیا کے حراستی مراکز میں قید خواتین کے ’رحم مادر‘ نکالے جانے کا اسکینڈل

امریکا: اسکینڈل اس وقت سامنے آیا جب ریاست جارجیا کی ارون کاؤنٹی کے ایک حراستی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے