مغل بادشاہ, کو شکست ہوئی تھی, اور بر صغیر میں, سلطنت برطانیہ, نے اپنا, راج شروع, کیا تھا

مغل بادشاہ کو شکست ہوئی تھی اور بر صغیر میں سلطنت برطانیہ نے اپنا راج شروع کیا تھا

اسلام آباد: سینیٹ میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر تحریک التوا پر بحث کرتے ہوئے پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے سینیٹر میاں رضا ربانی کا کہنا ہے تھا کہ اس وقت آئی ایم ایف پاکستان کے آئندہ مالی سال کے بجٹ پر ہدایات دینے میں مصروف ہے

اسلام آباد اور آئی ایم ایف کے درمیان ممکنہ معاہدے کو مغل بادشاہ اور ایسٹ انڈیا کمپنی کے درمیان ہونے والے معاہدے سے تشبیہ دی جس سے قبل مغل بادشاہ کو شکست ہوئی تھی اور بر صغیر میں سلطنت برطانیہ نے اپنا راج شروع کیا تھا۔
میاں رضا ربانی کا کہنا تھا مغل دور حکومت میں ہونے والے معاہدے میں خزانے کی چابی ایسٹ انڈیا کمپنی کے لوگوں کو دے دی گئی تھی جنہوں نے برِ صغیر کی حکومت لوٹی اور اسے انگلینڈ لے گئے۔
پی پی پی رہنما نے کہا کہ ظاہری طور پر پاکستانی معیشت بھی اسی طرح آئی ایم ایف کے حوالے کی جارہی ہے۔
گزشتہ حکومتیں بھی آئی ایم ایف کے پاس گئیں اور معاہدے کیے لیکن کبھی اس طرح ‘بیچنے والا’ معاہدہ کبھی نہیں کیا گیا، یہ واضح ہے کہ وزیر خزانہ کو تبدیل کرکے آئی ایم ایف کا بندہ لایا گیا ہے۔
گورنر اسٹیٹ بینک کی تقرری سے متعلق میاں رضا ربانی نے کہا کہ آئی ایم ایف کے ایک حاضر سروس حکام کو مرکز بینک کا سربراہ مقرر کر دیا گیا، جبکہ چیئرمین ایف بی آر کی تقرری واضح طور پر مفادات سے تصادم کا معاملہ ہے۔

یہ بھی پڑھیں

کورونا وائرس کے نئے کیسز سامنے آنے کی شرح میں بدستور اضافہ

کورونا وائرس کے نئے کیسز سامنے آنے کی شرح میں بدستور اضافہ

اسلام آباد: ڈی ایچ او آفس اسلام آباد کی رپورٹ کے گذشتہ روز اسلام آباد …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے